حضرت داتا گنج بخش ؒ کی در گاہ روحانیت کی یونیورسٹی ہے:صوبائی وزیر اوقاف سید سعید الحسن شاہ

یہ بات انہوں نے علماء کرام اور طالب علموں کے 15رکنی وفد سے ملاقات کے دوران کہی۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعلی عثمان بزدار کے ویژن کے مطابق محکمہ اوقاف کے زیر انتظام درباروں اور مساجد کی تزئین و آرائش کی جارہی ہے

لاہور:صوبائی وزیر اوقاف سید سعید الحسن شاہ نے کہا ہے کہ حضرت داتا گنج بخش ؒ کی در گاہ روحانیت کی یونیورسٹی ہے جہاں دنیا بھر سے سینکڑوں عقیدت مند روزانہ حاضری دیتے ہوئے اپنی روح کو روحانی فیوض سے بہرہ ورکررہے ہیں۔ یہ بات انہوں نے علماء کرام اور طالب علموں کے 15رکنی وفد سے ملاقات کے دوران کہی۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعلی عثمان بزدار کے ویژن کے مطابق محکمہ اوقاف کے زیر انتظام درباروں اور مساجد کی تزئین و آرائش کی جارہی ہے۔

انہوں نے بتایا کہ داتا دربار میں وضو کے استعمال شدہ پانی کے ذخیرہ کے لئے واٹرسٹوریج ٹینک تیار کیا گیا ہے۔ اس منصوبے پر 13.689 ملین روپے لاگت آئی ہے اور90 فیصد کام مکمل ہو جا چکا ہے جبکہ 10فیصد کام ایک ماہ میں مکمل کر لیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ اس واٹر ٹینک میں 60 ہزار گیلن پانی ذخیرہ ہو سکے گا۔ اس منصوبے کی تفصیل بتاتے ہوئے صوبائی وزیر نے کہا کہ ویسٹ واٹر ٹینک داتا دربار ہسپتال میں قائم کیا گیا ہے۔ اس مقصدکے لئے 10 انچ قطر کی 25 سوفٹ لمبی پی وی سی پا ئپ لائن دربارسے ہسپتال تک بچھائی گئی ہے۔

اس پائپ لائن کے مین ہولز پر مضبوط ڈھکن لگائے گئے ہیں تا کہ بارشوں کا گندہ پانی شامل نہ ہو۔ سعید الحسن شاہ نے بتایا کہ داتا دربار کے وضو خانے کے پانی کو ٹینکرز کے ذریعے نرسریوں، گرین بیلٹس اور سڑکوں کی دھلائی کے لئے استعمال میں لا یا جائے گا۔ اس سلسلہ میں تجرباتی طور پر پی ایچ اے کے ٹینکر زنے سٹوریج ٹینک سے پانی لینا شروع کر دیا ہے۔ انہوں نے مزیدکہا کہ مر حلہ وار درباروں اور مساجد میں ویسٹ واٹر ٹینک قائم کرکے استعمال شدہ پانی کو استعمال میں لایا جائے گا۔