کاروباری عمل کو سہل بنائے بغیر تیز-رفتار معاشی ترقی ممکن نہیں، صوبائی وزیر صنعت و تجارت میاں اسلم اقبال

سرکاری محکمے غیر ضروری ریگولیشنز کا خاتمہ کرکے کارو باری عمل کو سہل بنائیں صوبائی وزیر کا محکمہ تحفظ ماحولیات کی کارکردگی کا جائزہ لینے کے حوالے سے منعقدہ اجلاس سے خطاب

کاروباری عمل کو سہل بنائے بغیر تیز-رفتار معاشی ترقی ممکن نہیں، صوبائی وزیر صنعت و تجارت میاں اسلم اقبال

لاہور :صوبائی وزیر صنعت و تجارت میاں اسلم اقبال کی زیر صدارت محکمہ صنعت و تجارت کے کمیٹی روم میں اجلاس منعقد ہوا جس میں محکمہ تحفظ ماحولیات کی کارکردگی، استعداد کار بڑھانے آئندہ کے لائحہ عمل اور محکمہ میں اصلاحات کے عمل کا جائزہ لیا گیا۔صوبائی وزیر تحفظ ماحولیات باؤ رضوان، سیکرٹری محکمہ تحفظ ماحولیات، ڈی جی،وزیر اعلیٰ معائنہ ٹیم کے اراکین اور متعلقہ افسران نے اجلاس میں شرکت کی۔سیکرٹری تحفظ ماحولیات نے ادارے میں اصلاحات کے حوالے سے اقدامات بارے بریفنگ دی۔

صوبائی وزیر صنعت و تجارت میاں اسلم اقبال نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ کاروبار میں آسانیاں پیدا کرنے کے حوالے سے تمام محکموں کو اپنا کردار ادا کرنا ہے ا ورکاروباری عمل کو سہل بنائے بغیر تیز،رفتار معاشی ترقی ممکن نہیں۔ انہوں نے کہا کہ غیر ضروری ریگولیشن کاخاتمہ کرکیکاروبار میں آسانیاں پیدا کرنا وزیراعظم کا ویزن ہے۔

صوبائی وزیر نے کہا کہ تحفظ ماحول کے حوالے سے عالمی بنک کی گائیڈ لائن پر عملدرآمد جاری رکھا جائے، اورمحکمہ تحفظ ماحولیات فرسودہ ریگولیشن کوبدلیاور جدید ٹیکنالوجی سے استفادہ کر ے۔ صوبائی وزیر باؤ ضوان نے کہا کہ محکمہ میں جدید اصلاحات کی گئی ہیں اور،ون ونڈو کی سہولت فراہم کی گئی ہے۔ سیکرٹری ماحولیات نے بتایا کہ محکمہ کو آٹومیشن پر لاکر لوگوں کو گھر بیٹھے خدمات کی فراہمی یقینی بنائی جائے گی۔