حکومت کی ماحولیاتی پالیسیاں موسمیاتی تبدیلی کے اثرات کم کرنے اور آنے والی نسلوں کے لئےایک سرسبز و صاف پاکستان کے عزم کی عکاس ہیں، وزیراعظم عمران خان

حکومت کی ماحولیاتی پالیسیاں موسمیاتی تبدیلی کے اثرات کم کرنے اور آنے والی نسلوں کے لئےایک سرسبز و صاف پاکستان کے عزم کی عکاس ہیں، وزیراعظم عمران خان

اسلام آباد :وزیر اعظم عمران خان نے کہا ہے کہ حکومت کی ماحولیاتی پالیسیاں موسمیاتی تبدیلی کے اثرات کم کرنے اور آنے والی نسلوں کے لئےایک سرسبز و صاف پاکستان کے عزم کی عکاس ہیں۔کوئی ملک ہمارےتجربات سےاستفادہ چاہتا ہےتوتعاون کرنے کے لئے تیارہیں۔ہفتہ کو ایک ٹویٹ میں وزیراعظم نے کہا کہ موسمیاتی تبدیلی کےحوالےسےکانفرنس میں پاکستان کو مدعو نہ کئے جانے پر اٹھنے والی آوازوں پر حیرانی ہوئی ہے۔پاکستان کی حکومت کی ماحولیاتی پالیسیاں موسمیاتی تبدیلی کےمہلک اثرات کم کرنے اور آنے والی نسلوں کے لئےایک سرسبز و صاف پاکستان کے عزم کا عکاس ہیں۔انہوں نے کہا کہ ‏ سرسبزپاکستان، 10 ارب درختوں کا سونامی،ماحول دوست کاوشیں اور دریاؤں کی صفائی جیسےاقدامات اٹھائےجارہے ہیں۔وزیر اعظم نے کہا کہ خیبرپختونخوا سےابتدا کرتےہوئےہم نے7برس میں وسیع تجربہ حاصل کیا ہے اورہماری پالیسیوں کا اعتراف اور اُن کی توصیف کی جا رہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ کوئی ملک ہمارےتجربات سےاستفادہ چاہتا ہےتوہم اس کےلئےتعاون کرنے کے لئے تیارہیں۔وزیر اعظم نے کہا کہ‏ عالمی برادری اگر ماحولیاتی تغیرات کے مہلک اثرات سے نمٹنے میں سنجیدہ ہے تو وہ ماحولیاتی تغیرات کے حوالے سے اقوام متحدہ کے 2021 میں ہونے والے اجلاس (سی او پی26) میں اپنی ترجیحات پہلے ہی پیش کر چکے ہیں