صوبائی حکومت کا بورڈ آف ریوینو میں کمپیوٹرائزڈ لینڈ بینک بنا نے کا فیصلہ

 قبضہ مافیا سے واگزارشدہ سرکاری اراضی کا مکمل ریکارڈ لینڈ بینک میں کیا جا رہا ہے صوبہ بھرمیں قبضہ مافیا کے خلاف بھرپور اور منظم کریک ڈاؤن جاری ہے

صوبائی حکومت کا بورڈ آف ریوینو میں کمپیوٹرائزڈ لینڈ بینک بنا نے کا فیصلہ

لاہور:صوبائی حکومت نے بورڈ آف ریوینو میں کمپیوٹرائزڈ لینڈ بینک بنا نے کا فیصلہ کیا ہے۔ قبضہ مافیا سے واگزارشدہ سرکاری اراضی کا مکمل ریکارڈ لینڈ بینک میں کیا جا رہا ہے۔ یہ بات صوبائی وزیر مال ملک محمد انورنے آج اپنے آفس میں ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہی۔ صوبائی وزیر نے کہا ہے کہ لینڈ بینک کا سنٹرلائزڈ سسٹم بورڈ آف ریونیو میں قائم کیا جارہا ہے۔انہوں نے کہا ہے کہ جدید ترین لینڈ بینک کے ذریعے36اضلاع میں موجود سٹیٹ لینڈ کا ڈیٹا ایک جگہ اکھٹا اور سٹور کیا جائے گا۔ صوبہ بھر کے اضلاع کے ڈپٹی کمشنرز سے سٹیٹ لینڈکا ڈیٹا حاصل کر کے لینڈ بینک میں جمع کیا جائے گا۔

صوبائی وزیر نے بتایا کہ صوبہ بھرمیں قبضہ مافیا کے خلاف بھرپور اور منظم کریک ڈاؤن جاری ہے۔ انہوں نے کہا کہ محکمہ بور ڈ آف ریونیو قبضہ مافیا کے خلاف زیرو ٹالرنس پالیسی پر عمل پیرا ہے اورپنجاب بھر میں قبضہ مافیا کے خلاف بلا امتیاز کارروائی عمل میں لائی جا رہی ہے۔ ملک محمدانور نے کہا کہ حکومت بیک وقت سٹیٹس کو کے خاتمے اور کرپشن کے خلاف برسرِ پیکار ہے۔انہوں نے کہا کہ لینڈ بینک سے ریونیو معاملات میں کرپشن کا خاتمہ ہو گا۔انہوں نے مزید کہا کہ لینڈ بینک سے سرکاری اراضی کے بہتر استعمال میں مدد ملے گی۔