کشمیریوں کیساتھ کھڑے رہیں گے،بھارت جو چاہے کر لے 5 اگست کا اقدام کوئی قبول نہیں کرے گا : سول و عسکری قیادت

دشمن پاکستان اور خطے میں عدم استحکام چاہتا ہے، بھارت جو چاہے کر لے 5 اگست کا اقدام کوئی قبول نہیں کرے گا،

کشمیریوں کیساتھ کھڑے رہیں گے،بھارت جو چاہے کر لے 5 اگست کا اقدام کوئی قبول نہیں کرے گا : سول و عسکری قیادت

اسلام آباد، مظفر آباد : وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ آخری دم تک کشمیریوں کے ساتھ کھڑے رہیں گے ‘بھارت جو مرضی کر لے کشمیری جد وجہد جاری رکھیں گے. 5 اگست کا اقدام کوئی قبول نہیں کرے گا‘ حق ِ خود ارایت ملنے تک تحریک جاری رہے گی، مظلوم کشمیریوں کو یقین دلانا چاہتے ہیں پاکستانی قوم اور فوج آ پ کے ساتھ کھڑی ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ایل او سی کے دورے پر روانگی سے قبل گفتگو اور وزیر اعظم آزادکشمیر راجہ فاروق حیدر سے ملاقات کے موقع پربات چیت کرتے ہوئے کیا جبکہ انہوں نے وزیر دفاع پرویز خٹک ‘معاون خصوصی برائے قومی سلامتی معید یوسف اورصحافیوں کے ہمراہ چری کوٹ سیکٹرپر لائن آف کنٹرول کا دورہ کیا اور بھارتی جارحیت پر فوجی حکام سے بریفنگ لی ۔

 تفصیلات کے مطابق کنٹرول لائن کے دورے پر روانگی سے قبل وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے ایک ویڈیو پیغام میں کہا کہ وزیردفاع اور میں آزاد کشمیر میں لائن آف کنٹرول کے دورہ پر جارہے ہیں۔

ہم ان مظلوم کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے لیے جارہے ہیں جو آئے دن بھارت کی بلاجواز فائرنگ کا نشانہ بنتے ہیں۔ہم ان کشمیریوں کو یقین دلانا چاہتے ہیں کہ پاکستان کی قوم، پاکستان کی افواج آپ کے ساتھ کھڑی ہے۔

بعد ازاں شاہ محمود‘ پرویز خٹک اور معید یوسف کیساتھ ایل او سی پہنچے اور وہاں تعینا ت پاک فوج کے افسروں اور جوانوں سے ملا قاتیں کی اس موقع پر پاک فوج کے افسران نے انہیں بھارت کی مسلسل کارروائیوں ‘شہری آبادی کو نشانہ بنانے اور بھارت کو ان کاروائیوں کا جواب دینے کے بارے میں تفصیلی بر یفنگ دی گئی۔