ذمہ دار ادارے کی حیثیت سے فیصلے پر نظر ثانی کی، وسیم خان

وسیم خان نے کہا کہ تبدیلی کے لیے وقت کا چناؤ بہت اہم ہوتا ہے لہٰذا اس عمل سے متعلق اپنائے گئے طریقہ کار اور ذرائع مواصلات میں بہتری کی ضرورت تھی

ذمہ دار ادارے کی حیثیت سے فیصلے پر نظر ثانی کی، وسیم خان

پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے چیف ایگزیکٹو وسیم خان کا کہنا ہے کہ ایک ذمہ دار ادارے کی حیثیت سے ہم نے اپنے فیصلےکا دوبارہ جائزہ لینے کے بعد اس پر فوری نظرثانی    کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ وسیع پیمانے پر اسٹاف کی زیادتی موجودہ بورڈ کے لیے طویل مدتی پائیداری کا مسئلہ ہے۔وسیم خان نے کہا کہ تبدیلی کے لیے وقت کا چناؤ بہت اہم ہوتا ہے لہٰذا اس عمل سے متعلق اپنائے گئے طریقہ کار اور ذرائع مواصلات میں بہتری کی ضرورت تھی۔

اس دوران پی سی بی اپنی ری اسٹرکچرنگ کا عمل جاری رکھے گا اور اس حوالے سے اپنے ملازمین کی معقول تعداد کویقینی بنانے کے لیے مقررہ وقت پر ضروری فیصلے کرے گا۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ ملک بھر میں پی سی بی کے کُل ملازمین کی تعداد 710 ہے جس میں سے361 لاہور اور 70 کراچی میں ملازمت سرانجام دے رہے ہیں۔ واضح رہے کہ پاکستان کرکٹ بورڈ نے 55 اسٹاف اراکین کو رواں ہفتے جاری کیے گئے ملازمت سے برخاستگی کے نوٹسز واپس لے لیے ہیں۔