پاکستان اور امریکی فضائیہ کی مشترکہ فضائی مشقیں فیلکن ٹیلن آپریشنل ائیربیس پر اختتام پذیر

 پاکستان اور امریکی فضائیہ کی مشترکہ فضائی مشقیں فیلکن ٹیلن آپریشنل ائیربیس پر اختتام پذیر

اسلام آباد۔ :پاکستان اور امریکی فضائیہ کی مشترکہ فضائی مشقیں فیلکن ٹیلن آپریشنل ائیربیس پر اختتام پذیر ہو گئیں۔ ترجمان پاک فضائیہ کےمطابق ایئر مارشل زاہد محمود ڈپٹی چیف آف دی ائیر اسٹاف (پرسنیل) اور امریکی سفیر انجیلا ایگلر نے پاک فضائیہ کے ایک آپریشنل بیس پر جاری پاکستان اور امریکی فضائیہ کی مشترکہ فضائی مشقوں فیلکن ٹیلن کا معائنہ کیا۔

فضائی مشقوں کا آغاز 26 فروری کو پاک فضائیہ کے آپریشنل بیس پر امریکی فضائیہ کے لڑاکا طیاروں کی تعیناتی سے ہوا۔ مشقوں کا مقصد حقیقت پسندانہ عصری منظرناموں میں پیچیدہ فضائی آپریشنز میں انٹر آپریبلٹی کا فروغ تھا۔ ائیر مارشل زاہد محمود نے دونوں فضائی افواج کے عملے سے گفتگو کرتے ہوئے شرکاء کو مشقوں کی کامیاب تکمیل پر مبارکباد دی۔

انہوں نے ان اہم مشقوں کے بہترین اور پیشہ ورانہ انعقاد پر فضائی اور زمینی عملے کی تعریف بھی کی۔ انہوں نے مزید کہا کہ دونوں فضائی افواج کے درمیان قابلِ رشک دوستانہ تعلقات کی تاریخ ایک طویل عرصہ پر محیط ہے۔ انہوں نے اس امید کا بھی اظہار کیا کہ یہ مشقیں دونوں فضائی افواج کو ایک دوسرے کے تجربات سے سیکھنے کے ساتھ ساتھ باہمی تعاون اور انٹر آپریبلٹی کو فروغ دینے میں بھی معاون ثابت ہوں گی۔