کسی بھی  جیل میں قیدیوں کے ساتھ غیر انسانی سلوک پر سخت کاروائی کی جائے گی: فیاض الحسن چوہان

محکمہ جیل خانہ جات کو ''نفرت انسان سے نہیں جرم سے ہے'' کے اصول پر آگے لے کر چلیں گے

 کسی بھی  جیل میں قیدیوں کے ساتھ غیر انسانی سلوک پر سخت کاروائی کی جائے گی: فیاض الحسن چوہان

لاہور : وزیر جیل خانہ جات پنجاب فیاض الحسن چوہان نے کہا ہے کہ محکمہ جیل خانہ جات کو ''نفرت انسان سے نہیں جرم سے ہے'' کے اصول پر آگے لے کر چلیں گے اور اسیران کو انسانیت اور اسلام کے اصولوں کے مطابق معاشرے کے کارآمد رکن بنانے پر کام کریں گے۔ فیاض الحسن چوہان نے کہا کہ کسی بھی  جیل میں قیدیوں کے ساتھ غیر انسانی سلوک پر سخت کاروائی کی جائے گی۔ انہوں نے مزید کہا ہے کہ وزیر اعظم عمران خان کے جذبہ انسانی ہمدردی کے تحت قیدیوں اور ان کے خاندانوں کی ویلفیئر پر خصوصی توجہ دی جائے گی۔

ان خیالات کا اظہار وزیر جیل خانہ جات پنجاب فیاض الحسن چوہان نے جیل ریفارمز کے حوالے سے اعلٰی سطحی اجلاس کی صدارت کے دوران کیا۔ اجلاس میں محکمہ جیل خانہ جات کے آئی جی مرزا شاہد سلیم بیگ، سپیشل سیکرٹری سلمان غنی، ایڈیشنل سیکرٹری ذیشان شبیر رانا، ڈپٹی سیکرٹری(پرزنز) نائلہ طیب، ڈائریکٹر پیرول شکیل احمد اور متعلقہ سیکشن افسران نے شرکت کی۔ اجلاس میں وزیر جیل خانہ جات کو قیدیوں کی بہتری اور جیل اصلاحات پر تفصیلی بریفنگ دی گئی۔ اس موقع پر فیاض الحسن چوہان نے پنجاب بھر کی جیلوں میں اسیران کی فلاح و بہبود کے لیے مجوزہ قوانین میں ترامیم کے حوالے سے سفارشات طلب کر لیں۔ انہوں نے بتایا کہ پیرول قوانین کو زیادہ سے زیادہ قیدیوں کے لیے کارآمد بنانے کے حوالے سے کام کا آغاز کر دیا گیا ہے۔