تمام غیر ملکیوں کی رجسٹریشن کا فیصلہ کیا ہے، 40 ، 50 ہزار افراد کا کوئی ریکارڈ نہیں، منشیات کے خلاف بڑے پیمانے پر کارروائی کی جائے گی، ٹی ایل پی بارے فیصلہ کابینہ کرے گی، وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید احمد

تمام غیر ملکیوں کی رجسٹریشن کا فیصلہ کیا ہے، 40 ، 50 ہزار افراد کا کوئی ریکارڈ نہیں، منشیات کے خلاف بڑے پیمانے پر کارروائی کی جائے گی، ٹی ایل پی بارے فیصلہ کابینہ کرے گی، وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید احمد

اسلام آباد :وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید احمد نے کہا ہے کہ حکومت پاکستان نے تمام غیر ملکیوں کی رجسٹریشن کرنے کا فیصلہ کیا ہے، 40 سے 50 ہزار افراد ،جو گزشتہ 70 سا ل میں پاکستان میں داخل ہوئے، لاپتہ ہو گئے، ان کا کوئی ریکارڈ نہیں،

طورخم بارڈر پر 4 سے 5 ہزار پھنسے پاکستانیوں کے لئے سرحد کو کھولنے کا فیصلہ کیا ہے، ایلئن کارڈ پر اکائونٹ ، سم کھولنے اور کاروبار کرنے کی اجازت دی جائے گی، منشیات کے خلاف اسلام آباد میں بڑے پیمانے پر کارروائی کی جائے گی،

پاکستان میں بڑے پیمانے پر دوسرے ممالک سےآ رہی ہے، آزاد کشمیر کے انتخابات میں پاکستان تحریک انصاف کامیاب ہو کر حکومت بنائے گی۔ ان خیالات کااظہارانہوں نے جمعرات کو نیشنل فرانزک سائنس ایجنسی کے دورے کے موقع پر میڈیاسے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

وزیرداخلہ نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف آزاد کشمیر کےانتخابات میں کامیابی حاصل کرے گی اور حکومت بنائے گی۔ انتخابی مہم چلانا سیاسی قیادت اور اپوزیشن کا حق ہے۔ اچھی بات ہے کہ اپوزیشن رہنما بھی انتخابی مہم میں بھرپور حصہ لے رہے ہیں لیکن اپوزیشن کو عوام کی حمایت حاصل نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ میں بھی آزاد کشمیر کے انتخابات میں پی ٹی آئی کی کامیابی کے لئے مہم چلا رہا ہوں۔

قوم عمران خان کو آئندہ الیکشن میں بھی ووٹ دے کر کامیاب کرے گی لیکن ہمیں اپنی کارکردگی مزید بہتر بنانا ہو گی۔ وزیر داخلہ نے کہا کہ یکم اگست سے چمن میں بارڈر پر آمد ورفت کے لئے الیکٹرانک نظام کام شروع کر دے گا۔وزیر داخلہ نے اعلان کیا کہ این سی او سی کے فیصلے کے تحت جن افراد کی ویکسی نیشن ہوئی ہے ان کے لئے طورخم کی سرحد کھول رہے ہیں۔

افغانستان میں کورونا وائرس کی وبا کا مسئلہ زیادہ ہے ۔ اس حوالے سے این سی او سی کی قیادت سے بات کروں گا ۔

انہوں نے کہا کہ سعودی عرب اور مڈل ایسٹ جانے کے خواہشمند 4 سے 5 ہزار پاکستانی طور خم بارڈر پر پھنسے ہوئے ہیں جن کا کورونا ٹیسٹ نیگٹو ہو گا وہ گھروں کو جا سکیں گے اور جو پازیٹو ہوں گے ان کے بارے میں این سی او سی لائحہ عمل طے کرے گا۔

وزیر داخلہ نے ایلئن کارڈ کے حامل افراد کے لئے بینک اکائونٹ کھولنے ، سم حاصل کرنے اور کاروبار کرنے کی اجازت دینے کی پالیسی کا بھی اعلان کیا اور کہاکہ جن کا ویزہ ختم ہو جائے وہ وزارت داخلہ سے رابطہ کرسکتے ہیں۔

انہوں نے تمام غیر ملکیوں کو رجسٹرڈ کرنے کے فیصلے کا اعلان کیا اور کہا کہ ہماری کوشش ہے کہ جو صورتحال بن رہی ہے اس کے پیش نظر ہر غیر ملکیکی رجسٹریشن کیا جائے ۔ جعلی شناختی کارڈ بنانے والوں کو پکڑاگیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان میں 40 سے 50 ہزار افراد 70 سال سے لاپتہ ہیں۔ یہ لوگ پاکستان میں داخل ہوئے اور اس کے بعد ان کا کچھ پتہ نہیں۔

انہوں نے کہا کہ آن لائن ویزہ کے اجرا کانظام وضع کر دیا گیا ہے۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ ٹی ایل پی کے حوالے فیصلہ کابینہ کرے گی۔کابینہ کے آئندہ اجلاس میں ان کا کیس پیش ہو گا۔

ایک سوال کے جواب میں وزیر داخلہ نے کہا کہ اسلام آباد میں منشیات کی فروخت زوروں پر ہے، پاکستان میں باہر سے بھی منشیات آ رہی ہیں،کوئی یہ بات ماننے کو تیار نہیں لیکن میں یہ بات زور دے کر کہہ رہا ہوں کہ پاکستان میں کوکین، آئس، ہیروئن اور کیپسول باہر سے زیادہ تعداد میں آ رہے ہیں، منشیات کے خلاف بڑی کارروائی کرنے جا رہےہیں۔

وزیرداخلہ نے کہا کہ برہان وانی کی شہادت کے موقع پر بھارتی وزارت داخلہ کے الزامات کی مذمت اور تردید کرتا ہوں۔ پاکستان 5 اگست کے بھارت کے غیر آئینی اور غیر قانونی اقدامات کی واپسی تک اس سے کوئی بات چیت نہیں کرے