نیوزی لینڈ نے میانمار کیساتھ سیاسی و فوجی تعلقات معطل کردیے

جیسنڈا آرڈرن نے کہا کہ نیوزی لینڈ میانمار کے فوجی رہنماؤں پر سفری پابندی بھی عائد کرے گا اور اس بات کو یقینی بنائے گا کہ اس کے امدادی پروگرام میں وہ منصوبے شامل نہیں ہوں گے جو فوجی حکومت کے ساتھ فراہم کیے جاتے ہیں

نیوزی لینڈ نے میانمار کیساتھ سیاسی و فوجی تعلقات معطل کردیے

میانمارمیں فوجی بغاوت کے بعد نیوزی لینڈ نے میانمار کے ساتھ سیاسی اور فوجی تعلقات معطل کردیے۔ غیرملکی خبر رساں ادارے کے مطابق نیوزی لینڈی کی وزیراعظم جیسنڈا آرڈرن نے پریس کانفرنس میں کہا کہ وہ حکومت میانمار کے ساتھ تمام اعلیٰ سطح کے سیاسی اور فوجی رابطے معطل کرنے کا اعلان کرتی ہیں۔ جیسنڈا آرڈرن نے کہا کہ نیوزی لینڈ میانمار کے فوجی رہنماؤں پر سفری پابندی بھی عائد کرے گا اور اس بات کو یقینی بنائے گا کہ اس کے امدادی پروگرام میں وہ منصوبے شامل نہیں ہوں گے جو فوجی حکومت کے ساتھ فراہم کیے جاتے ہیں۔