وائس چیئرپرسن او پی سی چوہدری وسیم اختر کی پاک آسٹریلیا فرنیڈ شپ فورم کے وفد سے ملاقات، ملاقات میں باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال

اوورسیز پاکستانیوں نے کثیر تعداد میں ترسیلات بھیج کر یہ ثابت کردیا کہ انہیں اپنے وزیر اعظم پر پورا بھروسہ ہے، وی سی او پی سی چوہدری وسیم اختر

وائس چیئرپرسن او پی سی چوہدری وسیم اختر کی پاک آسٹریلیا فرنیڈ شپ فورم کے وفد سے ملاقات، ملاقات میں باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال

لاہور : وائس چیئرپرسن اوور سیز پاکستانیز کمیشن ( او پی سی) پنجاب چوہدری وسیم اختر سے پاک آسٹریلیا فرنیڈ شپ فورم کے صدر ارشد نسیم بٹ نے وفد کے ہمراہ ان کے دفتر میں ملاقات کی۔ وفد میں انیلا ریاض، زاہدہ لطیف اور ولایت احمد فاروقی شامل تھے۔ وی سی او پی چوہدری وسیم اختر نے وفد کا پرتپاک استقبال کیا اور ان سے اوور سیز پاکستانیز کے مسائل کے حل کے حوالے سے تبادلہ خیال کیا۔ وائس چیئرپرسن چوہدری وسیم اختر نے معزز مہمان سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اوور سیز پاکستانیز کا ملک کی ترقی میں بے حد اہمیت کا حامل ہے اور وہ ملک کی ترقی میں بڑھ چڑھ کر حصہ لے رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ اوور سیز پاکستانیز کمیشن نے تارکین وطن کے مسائل کے حل کیلئے جامع حکمت عملی اپنائی ہے اور ان کیلئے او پی سی کے دروازے ہمیشہ کھلے ہیں۔ مجھے یہ جان کر بے خوشی ہوئی کہ اوورسیز پاکستانیوں نے ترسیلات بھیجنے میں ریکارڈ توڑ دیا اور صرف دسمبر کے مہینے میں 2.4 ارب ڈالر کی کثیر رقم ترسیلات کی صورت میں بھیجی یہ پاکستان کی تاریخ میں پہلی بار ہوا ہے کہ ترسیلات مسلسل 6 ماہ تک 2 ارب ڈالر سے زائد رہی ہیں۔

رواں مالی سال کے ان 6 ماہ کی ترسیلات کا مجموعی حجم 14.2 ارب ڈالر رہا جو گزشتہ برس سے 24.9 فیصد زیادہ ہے۔ ارشد نسیم بٹ نے اس موقع پر بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ اوور سیز پاکستانیز کمیشن کی کارکردگی قابل ستائش ہے کہ وہ اوور سیز پاکستانیز کے مسائل کو بہتر طور پر حل کر رہا ہے، ہمارا یہاں آنے کا مقصد یہ ہے کہ آپ کو 26 جنوری کو منائے جانے والے آسٹریلیا ڈے کی تقریب میں مدعو کیا جا سکے۔ وائس چیئرپرسن او پی سی چوہدری وسیم اختر نے معزز مہمان کا اوور سیز پاکستانیز کمیشن آمد پر انکا شکریہ ادا کیا۔