مارکیٹوں، بازاروں او ربزنس ہاؤسز کو حکومتی ہدایات پر سوفیصد عملدرآمد کرنالازمی: سید سعید الحسن شاہ

حکومت پنجاب کاکورونا کے حوالے سے جاری ایس او پیز پر سختی سے عملدرآمد کے لئے انتظامیہ اور پولیس کو سخت ہدایات ,  کسی بھی قسم کی ایس اوپیز کی خلاف ورزی پر قانون کے مطابق کارروائی عمل میں لائی جائے گی

 مارکیٹوں، بازاروں او ربزنس ہاؤسز کو حکومتی ہدایات پر سوفیصد عملدرآمد کرنالازمی: سید سعید الحسن شاہ

لاہور : صو بائی وزیر اوقاف سید سعید الحسن شاہ نے کہا ہے کہ حکومت پنجاب نے کورونا کے حوالے سے جاری ایس او پیز پر سختی سے عملدرآمد کے لئے انتظامیہ اور پولیس کو سخت ہدایات جاری کی ہیں۔ جن پر مارکیٹوں، بازاروں او ربزنس ہاؤسز کو حکومتی ہدایات پر سوفیصد عملدرآمد کرنالازمی ہوگا- کسی بھی قسم کی ایس اوپیز کی خلاف ورزی پر قانون کے مطابق کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

انہوں نے کہاکہ لاک ڈاؤن میں نرمی کے حوالے سے کسی کو ناجائزفائد ہ اٹھانے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔موجودہ حالات میں سب کو احتیاط اورذمہ داری کامظاہرہ کرناہوگا۔وفاقی حکومت کی رہنمائی میں تمام سٹیک ہولڈرز کی مشاورت سے فیصلے کیے جارہے ہیں۔عوام سے بھی اپیل ہے کہ وہ حکومتی ہدایات پرفوکس کرتے ہوئے عمل کریں۔ انہوں نے کہاکہ اپنے پیاروں کی حفاظت کے لئے ایس او پیز پر عملدرآمد شہریوں کے مفاد میں ہے۔

روز گارکے ساتھ ساتھ ایس اوپیز پر عملدرآمد بھی کرنا ہو گا- سماجی فاصلے قائم رکھنے کی پالیسی پر عملدرآمد کرنے میں ہی تحفظ اور حفاظت ہے۔ جتنی احتیاط کریں گے اتنا ہی شہری محفوظ رہیں گے-انہوں نے کہاکہ کورونا وباء کے باعث غیر معمولی حالات سے گزر رہے ہیں۔ حکومت نے کمزور طبقے پر پہلے بوجھ ڈالا ہے نہ آئندہ ڈالے گی۔حکومت کا محور کمزور طبقے کا تحفظ کرنا ہے۔بجٹ میں کمزور طبقے کا پورا خیال رکھا جائے گا۔انہوں نے کہاکہ صوبے کے وسائل میں اضافے کیلئے منفرد طریقے سے اقدامات کئے جارہے ہیں۔عام آدمی کی مشکلات و ضروریات کو مد نظر رکھ کر اقدامات تجویز کئے جائیں گے۔

متعلقہ محکمے اپنے اہداف کے حصول کے حوالے سے جامع حکمت عملی وضع کررہے ہیں۔انہوں نے کہاکہ عوام کو ریلیف کی فراہمی کیلئے بھرپور کوشش کی جائے گی۔ پنجاب وسائل کی دولت سے مالامال ہے۔ضرورت اس امر کی ہے کہ ان وسائل سے حقیقی معنوں میں استفادہ کرکے معیشت کو مستحکم کیا جائے۔ صوبے کے مالی وسائل میں اضافے کیلئے نئے اقدامات پر توجہ دی جارہی ہے۔ انہوں نے کہاکہ معاشی سرگرمیاں تیز ہونے سے روزگار کے نئے اور وسیع مواقع پیدا ہوں گے۔