لاہور:آئی جی جیل خانہ جات پنجاب مرزا شاہد سلیم بیگ کی ہدایات کے مطابق آج ڈسٹرکٹ جیل قصورپرآزمائشی مشقیں کی گئیں

ڈسٹرکٹ کورڈنیشن آفیسرقصور،ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر،پاک آرمی کا QRF Squard،میڈیکل سپرنٹنڈنٹ DHQہسپتال قصور،1122 آفس قصور،سول ڈیفنس،Bomb ڈسپوزل،CTD، TMO آفس قصور اور دیگر لوکل ایجنسی ڈسٹرکٹ قصور کو اطلاع کی گئی

لاہور:آئی جی جیل خانہ جات پنجاب مرزا شاہد سلیم بیگ کی ہدایات کے مطابق آج ڈسٹرکٹ جیل قصورپرآزمائشی مشقیں کی گئیں

لاہور: آئی جی جیل خانہ جات پنجاب مرزا شاہد سلیم بیگ کی ہدایات کے مطابق آج ڈسٹرکٹ جیل قصورپرآزمائشی مشقیں (Mock Excerise) کی گئیں۔جس کے لئے قبل ازیں ڈسٹرکٹ کورڈنیشن آفیسرقصور،ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر،پاک آرمی کا QRF Squard،میڈیکل سپرنٹنڈنٹ DHQہسپتال قصور،1122 آفس قصور،سول ڈیفنس،Bomb ڈسپوزل،CTD، TMO آفس قصور اور دیگر لوکل ایجنسی ڈسٹرکٹ قصور کو اطلاع کی گئی۔موک ایکسرسائز کے سلسلہ میں بوقت 11:30 بجے فرضی آلارم کروایا گیا اور جیل کے مین گیٹ سے 04 فرضی دہشت گردوں کو جیل حدود میں داخل کروایا گیا اور ان کو زیر تعمیر وارڈ ز لائنز میں چھپایا گیا۔

فرضی آلارم ہونے پر جیل ہذا کی تمام گارڈ ڈیوڑھی گیٹ کے سامنے جمع ہوگئی اسلحہ سے مسلح ہو کر ڈپٹی سپرنٹنڈنٹ اور لائن آفیسر ودیگر آفیسران جیل کی سربراہی میں ہنگامی سیکورٹی پلان کے مطابق فرضی دہشت گردوں کی چھپنے والی جگہ کی طرف اور جیل ہذا کی چاروں اطراف پوزیشن سنبھالیں۔فرضی آلارم کی آواز پر DSP سٹی اور DSP صدر سرکل قصور،ایلیٹ فورس، CTD،پاک آرمی کے QRF (سیکارڈ)،میڈیکل سپرنٹنڈنٹ DHQ ہسپتال قصور کی طرف سے میڈیکل ٹیم،1122 آفس قصور کی طرف سے ایمبولینس اور فائربرگیڈوہیکل،سول ڈنفیس قصور کی طرف سے آگ بجھانے والے آلات وبارودی مواد کو ناکارہ بنانے والے آلات کے ہمراہ،اور دیگر مقامی تھانہ کی پولیس فورس فوری طور پر جیل ہذا پہنچ گئی انھوں نے پوزیشن سنبھال لی اور دہشت گردوں سے فرضی مذکرات کیے گئے تاکہ ان قابو پانے کے لئے تمام فورسزکی مشاورت سے آپریشن کرنے کے لئے حکمت عملی وضع کرنے کے لئے ٹائم حاصل کیا جا سکے۔

آپریشن کی حکمت عملی پر اتفاق ہونے کے بعد کمانڈنگ آفیسر جیل ہذا نے آپریشن کی منظوری دی اور آپریشن کی کمانڈ کرتے ہوئے جیل آفیسران واہلکاران اور دیگر اداروں کی معاونت سے کامیاب آپریشن کرتے ہوئے فرضی دہشت گردوں پر قابو پا لیا گیا۔ موک ایکسرسائز کے موقعہ پر اندرون جیل تمام اسیران کو ان کی بارکوں میں بند کردیا گیا اور لاٹھیوں سے مسلح وارڈر گارڈ نے فوری طور پر اندرون جیل تمام جیل کا لاک اپ کروایا۔موک ایکسر سائز کے اختتام پر تما م محکمہ جات کو بروقت رسپانس دینے پر سپرنٹنڈنٹ جیل قصورغلام سرور سمراکی طرف سے شکریہ اداکیا گیا۔

٭٭٭٭