عوام لاپروا، اب سختی کروں گا، ایس او پیز پر عمل نہ ہونے سے اموات بڑھ رہی ہیں: عمران خان

جن کارخانوں، مارکیٹوں، مالز، ٹرانسپورٹ، محلوں اور گلی میں کورونا نکلے گا وہ علاقے سیل ہونگے ،  وزیراعظم

عوام لاپروا، اب سختی کروں گا، ایس او پیز پر عمل نہ ہونے سے اموات بڑھ رہی ہیں: عمران خان

اسلام آباد :  وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ ایس او پیز پر عمل نہ ہونے سے اموات بڑھ رہی ہیں، عوام نے لاپروائی دکھائی اب سختی کرونگا، معاملات کی خود نگرانی کرونگا، جہاں عمل نہیں ہوگا وہ علاقہ بند کر دینگے،جن کارخانوں، مارکیٹوں، مالز، ٹرانسپورٹ، محلوں اور گلی میں کورونا نکلے گا وہ علاقے سیل ہونگے۔ آج پوری دنیا کو احساس ہوگیا ہے کہ مکمل لاک ڈائون مسئلے کا حل نہیں ہے، اللہ کا شکر ہے حکومت دبائو میں نہیں آئی، اپوزیشن چاہتی ہے لاک ڈائون سے معیشت بیٹھے اور اموات بڑھیں، ایک صاحب لندن سے بھاگے آئے ماسک پہنا اور لیپ ٹاپ پر بیٹھ گئے،اسمارٹ لاک ڈائون پر فخر ہے، ہمارے حالات بھارت جیسے نہیں، اپنا کامیاب احساس پروگرام بھارت کیساتھ شیئر کرنے کیلئے تیار ہیں۔ 

ان خیالات کا اظہار وزیراعظم نے جمعرات کو کورونا وائرس کی صورتحال اور وباء سے نمٹنے کیلئے اقدامات پر اظہار خیال اور سماجی رابطے کی ویب سائٹ اپنے بیان کیا۔  کورونا کے حوالے سے اظہار خیال کرتے ہوئے وزیراعظم نے کہا کہ کورونا کے تیزی سے پھیلنے کے خدشہ کے پیش نظر وہ خود وزیراعظم آفس سے روزانہ کی بنیاد پر اس معاملے کی نگرانی کرینگے اور اس حوالے سے روزانہ کی بنیاد پر معلومات اکٹھی کی جائیں گی، گلیوں، محلوں، مارکیٹوں، فیکٹریوں، مساجد، ٹرانسپورٹ، پارکوں اور دفاتر سمیت ہر علاقے اور شعبے کی مانیٹرنگ ہو گی، جہاں ایس او پیز کی خلاف وزی ہوئی اس پر فوراً کارروائی ہو گی اور متعلقہ علاقے یا شعبہ کو بند کر دیا جائیگا۔ 

انہوں نے کہا کہ انتظامیہ سخت ایکشن لے گی اور کورونا ریلیف ٹائیگر فورس کے رضا کار اس حوالے سے انتظامیہ کی معاونت کرینگے انہوں نے کہا کہ کورونا کی وباءکیخلاف برسرپیکار ہیلتھ ورکرز جہاد کر رہے ہیں، حکومت ان کیلئے خصوصی پیکج دیگی، میری ٹیم نے تمام وفاقی اکائیوں اور ماہرین سے مکمل مشاورت کے بعد موثر حکمت عملی وضع کی اور بلا جواز تنقید کے باوجود حکومت کسی دباؤ میں نہیں آئی۔ آج پوری دنیا کو احساس ہو گیا ہے کہ مکمل لاک ڈاؤن مسئلہ کا حل نہیں ہے۔