تمام لٹریسی موبلائرز دور دراز کے علاقوں میں ہر دہلیزپرمحکمہ خواندگی کے پیغام کی ترسیل کے عمل کو مزید تیز اور قابل عمل بنائیں

بنیادی تعلیم ہر بچے کا حق ہے والدین کی بھی ذمہ داری ہے کہ وہ اپنے بچوں کو اس حق سے محروم نہ رکھیں اور سو فیصد شرح خواندگی کے حصول میں حکومتی کاوشوں کا حصہ بنیں۔ انہوں نے محکمہ لٹریسی کے متعلقہ حکام کو ہدایت کی ہے کہ غیر رسمی سکولوں اور تعلیم بالغاں کے نئے منصوبوں کی بر وقت اور معیاری تکمیل کو یقینی بنائیں

 تمام لٹریسی موبلائرز دور دراز کے علاقوں میں ہر دہلیزپرمحکمہ خواندگی کے پیغام کی ترسیل کے عمل کو مزید تیز اور قابل عمل بنائیں

لاہور:صوبائی وزیر خواندگی و غیر رسمی بنیادی تعلیم راجہ راشد حفیظ نے اپنے دفتر میں لٹریسی موبلائزرز کی کارکردگی سے متعلق اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہا ہے کہ تمام لٹریسی موبلائرز دور دراز کے علاقوں میں ہر دہلیزپرمحکمہ خواندگی کے پیغام کی ترسیل کے عمل کو مزید تیز اور قابل عمل بنائیں۔ بنیادی تعلیم ہر بچے کا حق ہے والدین کی بھی ذمہ داری ہے کہ وہ اپنے بچوں کو اس حق سے محروم نہ رکھیں اور سو فیصد شرح خواندگی کے حصول میں حکومتی کاوشوں کا حصہ بنیں۔ انہوں نے محکمہ لٹریسی کے متعلقہ حکام کو ہدایت کی ہے کہ غیر رسمی سکولوں اور تعلیم بالغاں کے نئے منصوبوں کی بر وقت اور معیاری تکمیل کو یقینی بنائیں علاوہ ازیں ان مراکز میں محض لکھنا پڑھنا سکھانے کی بجائے تعلیم کو با مقصد بنا کر معاشرے کی اصلاح و بہتری کیلئے حکومت کے ویژن پر پوری طرح عمل کیا جائے۔

انہوں نے یہ ہدایات محکمہ لٹریسی کی کارکردگی کے بارے میں بریفنگ لیتے ہوئے جاری کیں۔راجہ راشدحفیظ کا کہنا تھا کہ وزیر اعلیٰ پنجاب کی خصوصی ہدایات پر وزیر اعظم عمران خان کے ویژن کے مطابق غیر رسمی بنیادی تعلیم کے شعبے کو ترقی کے قومی دھارے میں فعال کردار ادا کرنے کے قابل بنانے اور اسے محض خانہ پری سے نکال کر با مقصد بنانے کیلئے پنجاب حکومت نے جو عملی اقدامات کئے ہیں ان کے نتیجے میں معاشرے کے اندر ایک واضح تبدیلی نظر آرہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ غیر رسمی بنیادی تعلیمی اداروں کے طلبہ کو ریگولر سکولوں کی طرح مشاہداتی علم کی سہولیات بھی فراہم کرنے کے اقدامات کئے گئے ہی جو اس سے قبل نہیں تھے ہماری ان کاوشوں کے نتیجے میں نہ صرف شرح خواندگی کے مطلوبہ نتائج حاصل ہورہے ہیں بلکہ ہر بچے کو تعلیم جو اس کا بنیادی حق ملنے کی طرف گامزن ہیں اور تعلیم کے دوران اس کی بہترین تربیت بھی ہورہی ہے جس سے ذمہ دار شہری اور باعمل مسلمان بننے میں ان کو مدد ملے گی۔

راجہ راشد حفیظ نے لٹریسی افسران سے کہا کہ وہ تمام متعلقہ اداروں سے مسلسل رابطے میں رہ کر نئے شروع کئے گئے منصوبوں کو بروقت پایہ تکمیل تک پہنچائیں تاکہ عام لوگ ان سے مستفید ہو سکیں۔ راجہ راشد حفیظ نے کہا کہ وہ خود بھی ان منصوبوں کی نگرانی کے لئے دوروں کے علاوہ متعلقہ حکام سے رابطوں میں ہیں اور رہیں گے۔ متعلقہ افسران نے صوبائی وزیر کو نئے لٹریسی سکولوں، پہلے سے موجود سکولوں میں غیر موجود سہولیات کی فراہمی، تعلیم بالغاں بالخصوص جیلوں کے اندر بنائے اور اپ گریڈ کئے گئے تعلیمی مراکز کے حوالے سے منصوبوں پر پیش رفت بارے آگاہ کیا۔صوبائی وزیر نے لٹریسی موبلائزرز کی پیشہ ورانہ کاوشوں کو سراہا۔ اجلاس میں لٹریسی موبلائزرزکو درپیش مسائل کے حل سے متعلق معاملات بھی زیر غور لائے گئے۔