ہندو اقلیتی کمیونٹی کے 14 رکن بھارت میں چھ ماہ گزارنے کے بعد اپنےوطن واپس پہنچ گئے

 ہندو اقلیتی کمیونٹی کے 14 رکن بھارت میں چھ ماہ گزارنے کے بعد اپنےوطن واپس پہنچ گئے

لاہور:۔  پاکستان کی ہندو اقلیتی کمیونٹی کے 14 رکن بھارت میں چھ ماہ گزارنے کے بعد اپنےوطن واپس پہنچ گئے ۔معاشی خوشحالی کے متلاشی بھارت جانے والے افراد کا کہنا تھا کہ ان کے معاشی خوشحالی  کے خواب چکنا چور ہوگئے ۔واہگہ بارڈر پر  صحافیوں سے باتیں کرتے ہوئے کنایہ لال اور نانک رام نے کہا کہ وہ بھارت  معاشی خوشحالی کے پیش نظر گئے لیکن یہ ان کے لیے ایک بھیانک خواب ثابت ہوا جس سے ان کی مشکلات میں بے حد اضافہ ہوگیا۔ بھارت نے حال ہی میں ایک قانون پاس کیا جس کی بدولت پاکستان، بنگلہ دیش اور افغانستان سے آنے  والے عیسائی، پارسی، جینز اور ہندوؤں کو جلد از جلد شہریت دی جا سکے گی لیکن حقیقت یہ ہے کہ جو ہندو بھارت گئے ہیں وہ شدید غربت کا شکار ہیں اور ان کی جانوں کو بھی خطرات لاحق ہیں۔ تقریبا اٹھائیس ہزار پاکستانی ہندو جودھ پور میں پھنسے ہوئے ہیں اور وہ وطن واپس آنے  کی آس لگائے بیٹھے ہیں۔