صوبائی وزیر اعجاز عالم آگسٹین کا سانحہ آرمی پبلک سکول پشاور کے شہداء کو خراج عقیدت

ایسے سانحہ کو بالکل فراموش نہیں کیا جا سکتا کیسے معصوم پھول کھلنے سے پہلے ہی مرجھا گئے، 16دسمبر2014کو گزرے چھ سال ہوگئے، جس دن122معصوم بچوں سمیت 140لوگوں کو شہید کردیا گیا تھا مگر آج بھی یہ واقعہ ذہنوں میں بیٹھا ہوا ہے

صوبائی وزیر اعجاز عالم آگسٹین کا سانحہ آرمی پبلک سکول پشاور کے شہداء کو خراج عقیدت

لاہور: صوبائی وزیر انسانی حقوق و اقلیتی امور اعجازعالم آگسٹین نے آرمی پبلک سکول پشاور کے شہداء کی چھٹی برسی کے موقع پر اپنے جاری کردہ ایک پیغام میں تمام شہداء کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایسے سانحہ کو بالکل فراموش نہیں کیا جا سکتا کیسے معصوم پھول کھلنے سے پہلے ہی مرجھا گئے، 16دسمبر2014کو گزرے چھ سال ہوگئے، جس دن122معصوم بچوں سمیت 140لوگوں کو شہید کردیا گیا تھا مگر آج بھی یہ واقعہ ذہنوں میں بیٹھا ہوا ہے۔

انہوں نے کہا کہ معصو م پھولوں کو کوئی نہیں بھلا سکتا مگرآج ضرورت اس امر کی ہے کہ تمام قوم ملکر اپنے بچوں کی حفاظت یقینی بنانے کیلئے ایک ہی صف میں کھڑی ہو تاکہ امن کے دشمنوں کو ایک واضح پیغام جائے کہ ہم سب ایک اور پاکستانی ہیں۔انہوں نے کہاکہ وزیراعظم پاکستان عمران خان کی زیر قیادت پاکستان بھر میں انسانی حقوق کی حفاظت یقینی بنانے کیلئے تمام تر وسائل بروئے کار لارہے ہیں اور انسانی حقوق کے مضمون کو نصاب کا حصہ بنا رہے ہیں تاکہ ابتداء سے ہی بچوں کو اپنے حقوق کا معلوم ہوسکے۔

صوبائی وزیر نے کہاکہ پاکستان بھر میں خواتین پر تشدد اور بالخصو ص بچوں سے جبری مشقت کی روک تھام یقینی بنانے کیلئے وفاق کے ساتھ ملکرموثر قانون سازی کر رہے ہیں تاہم حکومت تن تنہا سب کچھ نہیں کر سکتی اسلئے ہم سب کو ذمہ داری سے اپنا اپنا کردار نبھانا ہوگا۔