صوبائی وزیر صنعت و تجارت میاں اسلم اقبال کا آئندہ مالی سال کے صوبائی بجٹ پر تبصرہ

کرونا سے متاثرہ معشیت میں متوازن اور فلاحی بجٹ معاشی ٹیم کی قابل ستائش کاوش ہے۔بجٹ میں چھوٹے َاور درمیانے درجے کے کاروبار کے فروغ کیلئے ٹیکس میں چھو ٹ کا اعلان خوش آئند ہے

صوبائی وزیر صنعت و تجارت میاں اسلم اقبال کا آئندہ مالی سال کے صوبائی بجٹ پر تبصرہ

لاہور :  صوبائی وزیر صنعت و تجارت میاں اسلم اقبال نے آئندہ مالی سال کے صوبائی بجٹ پر اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ مشکل معاشی صورت حال کے باوجود وزیر اعلیٰ عثمان بزدار کی قیادت میں پنجاب حکومت نے شاندار بجٹ دیا ھے۔بجٹ میں محروم معیشت طبقات کی فلاح کیلئے موثر اقدامات تجویز کئے گئے ہیں۔تحریک انصاف کی وفاقی حکومت کی طرح پنجاب حکومت نے بھی ٹیکس فری بجٹ دے کر نئی تاریخ رقم کی ہے۔کرونا سے متاثرہ معشیت میں متوازن اور فلاحی بجٹ معاشی ٹیم کی قابل ستائش کاوش ہے۔بجٹ میں چھوٹے َاور درمیانے درجے کے کاروبار کے فروغ کیلئے ٹیکس میں چھو ٹ کا اعلان خوش آئند ہے۔

مارک اپ سبسڈی اور کریڈٹ گارنٹی سکیموں سے معاشی سرگرمیاں اور روزگار کے مواقع بڑھیں گے۔ایس ایم ای سیکٹر کے فروغ کے لئے 8ارب روپے کی خطیر رقم رکھی گئی ہے۔ صنعت کی ضروریات کے مطابق ھنر مند افرادی قوت کی تیاری کیلئے 6ارب87کروڑ روپے کی رقم رکھی گئی ہے۔آیندہ مالی سال کے دوران ایسے منصوبے لائے جا رھے ھیں جن سے روزگار کے زیادہ مواقع پیدا ہوں گے۔ھنر مند نوجوان پروگرام،سکل ڈویلپمنٹ، آن لائن لرننگ اور فنی تعلیم کے نئے کورسز کے اجراء سے مثبت تبدیلی آئے گی۔کاروبار میں آسانیاں پیدا کرنے کیلئے مزید اقدامات کئے جارہے ہیں۔

56ارب روپے سے زائد کے ٹیکس ریلف سے حکومت کی کاروبار دوست پالیسیوں کو تقویت ملے گی۔لاہور، بھاول پور اور فیصل آباد انڈسٹریل اسٹیٹس کو ترجیحی بنیادوں پر مکمل کیا جائے گا۔ان انڈسٹریل اسٹیٹس کی تکمیل سے معاشی و اقتصادی سرگرمیاں تیز ھونگی۔پبلک پرائیویٹ پارٹنر شپ کے تحت 165ارب روپے کے منصوبوں کی نشاندہی کرلیں گئی ہے۔پی ٹی آئی کی حکومت عوام کی فلاح کے لئے اقدامات کا سلسلہ جاری رکھے گی۔