جمہوری اقدار کے فروغ کیلئے پارلیمان کا کردار انتہائی اہم ہے، چیئرمین سینیٹ کا نومنتخب ارکان کی تربیتی ورکشاپ سے خطاب

جمہوری اقدار کے فروغ کیلئے پارلیمان کا کردار انتہائی اہم ہے، چیئرمین سینیٹ کا نومنتخب ارکان کی تربیتی ورکشاپ سے خطاب

اسلام آباد :چیئرمین سینیٹ محمد صادق سنجرانی نے کہا ہے کہ موجودہ دور میں جمہوری اقدار کے فروغ کیلئے پارلیمان کا کردار انتہائی اہم ہے، پاکستان نے جمہوریت کے فروغ کیلئے بے شمار قربانیاں پیش کیں، جدید دور میں بے شمار چیلنجز کا سامنا ہے جن سے نبردآزما ہونے کیلئے بنیادی معلومات و حقائق سے آگاہی ضروری ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے منگل کو نو منتخب اراکین سینیٹ کو سینیٹ قواعد وضوابط سے آگاہی اور پارلیمانی امور سے متعلق تربیت فراہم کرنے کیلئے ادارہ برائے پارلیمانی خدمات میں منعقدہ ورکشاپ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔چیئرمین سینیٹ نے کہا کہ نو منتخب اراکین سینیٹ کو ادارہ برائے پارلیمانی خدمات سے تربیتی عمل میں خوش آمدید کہتا ہوں، ایسے تربیتی پروگراموں کی انتہائی اہمیت ہے، نئے ممبران سینیٹ اور کمیٹیوں کے چیئرمینوں کیلئے ایسے تربیتی کورس کا انعقاد ضروری ہے۔انہوں نے کہا کہ ادارہ برائے پارلیمانی خدمات ایک منفرد ادارہ ہے اس سے مجھے بھی سیکھنے کا موقع ملا، انتہائی محنتی اور تجربہ کار افسران نئے ارکین پارلیمنٹ کو ہر قسم کی رہنمائی فراہم کرنے کو تیار ہیں، اس ادارے سے نیشنل انسٹی ٹیوٹ اور منیجمنٹ کی طرز پر کورسز متعارف کروا رہے ہیں، اس حوالے سے ایکٹ میں ترمیم بھی کی جائے گی۔

انہوں نے کہا کہ موجودہ دور میں جمہوری اقدار کے فروغ کیلئے پارلیمان کا کردار انتہائی اہم ہے، پاکستان نے جمہوریت کے فروغ کیلئے بے شمار قربانیاں پیش کیں ، جدید دور میں بے شمار چیلنجز کا سامنا ہے جن سے نبردآزما ہونے کیلئے بنیادی معلومات و حقائق سے آگاہی ضروری ہے۔ چیئرمین سینیٹ نے کہا کہ ادارہ برائے پارلیمانی خدمات پارلیمنٹرین اور سرکاری افسران کی تربیت کیلئے اہم کردار ادا کر رہا ہے، 21 ویں صدی میں استعداد کار کو بہتر بنا کر مسائل کا حل وقت کی بنیادی ضرورت ہے۔انہوں نے کہا کہ پارلیمنٹ سپریم ادارہ ہے اور حکومت کی مرکزی مشینری کی حیثیت رکھتا ہے، پارلیمنٹرین کیلئے جدید دور کے تناظر میں چیلنجز کا سامنا کرنے کیلئے متعلقہ امور کی مہارت کا ہونا لازمی ہے،نو منتخب اراکین سینیٹ کو آگاہی فراہم کر کے قانون سازی اور دیگر امور کو بہتر بنانے میں مدد ملے گی۔ انہوں نے کہا کہ پارلیمنٹری خدمات کو مزید موثر بنانے کیلئے مخصوص انتظامی کورسز بارے آگاہی فراہم کی جائے گی،

ادارہ برائے پارلیمانی خدمات سے پارلیمنٹرین کو حقائق پر مبنی معلومات اور تحقیق فراہم کی جائیں تاکہ وہ موثر قانون سازی میں اپنا موثر کردار ادا کر سکیں۔ چیئرمین سینیٹ نے کہا کہ نو منتخب اراکین کیلئے موثر قانون سازی کرنا اعزاز کی بات ہے جس کیلئے ہمیں سخت محنت کی ضرورت ہے۔

انہوں نے اس امید کا اظہار کیا کہ اس تربیتی عمل سے پارلیمنٹرین موثر معلومات حاصل کر کے سود مند قانون سازی کے ذریعے ملکی تعمیر و ترقی میں اپنا کردار ادا کریں گے.