میاں اسلم اقبال کی زیر صدارت ٹاسک فورس برائے پرائس کنٹرول کا اجلاس،اشیاء ضروریہ کی دستیابی،قیمتوں اور مانیٹرنگ کے عمل کا جائزہ لیا گیا

صوبائی وزیر مرغی کے گوشت، انڈوں اور ادرک کی قیمتوں میں اضافہ پرلائیوسٹاک اور زراعت کے محکموں کے افسران پر برس پڑے۔عوام کو ریلیف کی فراہمی کے لئے متعلقہ محکمے اور انتظامیہ اپنی ذمہ داریوں کا احساس کرے، صوبائی وزیر صنعت و تجارت میاں اسلم اقبال

میاں اسلم اقبال کی زیر صدارت ٹاسک فورس برائے پرائس کنٹرول کا اجلاس،اشیاء ضروریہ کی دستیابی،قیمتوں اور مانیٹرنگ کے عمل کا جائزہ لیا گیا

لاہور:- ……صوبائی وزیر صنعت و تجارت میاں اسلم اقبال کی زیر صدارت آج سول سیکرٹریٹ میں ٹاسک فورس برائے پرائس کنٹرول کا اجلاس منعقد ہوا جس میں اشیاء ضروریہ کی دستیابی،قیمتوں اور مانیٹرنگ کے عمل کا جائزہ لیا۔صوبائی وزیر نے مرغی کے گوشت، انڈوں اور ادرک کی قیمتوں میں اضافے پرسخت تشویش اور ناراضگی کا اظہار کیااور محکمہ زراعت اور محکمہ لائیو سٹاک کے افسران پر برس پڑے، صوبائی وزیر نے استفسار کیا کہ مرغی کے گوشت اور انڈوں کی قیمتوں کو اعتدال پر رکھنے کے لئے محکمہ لائیو سٹاک نے کیا اقدامات کئے،جس پر محکمہ لائیو سٹاک کے افسران تسلی بخش جواب نہ دے سکے، صوبائی وزیر نے ہدایت کی کہ انڈوں کو سٹور کرنے کی پالیسی پر نظرثانی کی جائے اور محکمہ زراعت زرعی اجناس کی صورت حال کے بارے میں وقت سے پہلے آگاہ کر ے، آٹا اور چینی کے ساتھ سبزیوں اور پھلوں کی قیمتوں پر بھی کڑی نظر رکھی جائے۔ میاں اسلم اقبال نے کہا کہ عوام کو ریلیف کی فراہمی کے لئے متعلقہ محکمے اور انتظامیہ اپنی ذمہ داری کا احساس کریں۔اشیاء ضروریہ کی قیمتوں کو اعتدال پر رکھنے کے لئے خطوط لکھنے اور باتیں کرنے کی بجائے عملی اقدامات کئے جائیں۔صوبائی وزیر نے ہدایت کی کہ سرکاری نرخوں کی خلاف ورزی پر انتظامیہ بلاامتیاز سخت کاروائی کرے۔صوبائی وزیر نے خانیوال میں آٹے کی عدم دستیابی کا سخت نوٹس لیتے ہوئے صورتحال فوری بہتر بنانے کی ہدایت کی اور کہا کہ ٹرکنگ پوائنٹس پر انحصار کم کرکے دکانوں پر آٹے کی دستیابی یقینی بنائی جائے۔اربن یونٹ کے حکام نے صوبے بھر میں اشیاء ضروریہ کی دستیابی اور قیمتوں بارے تفصیلی بریفنگ دی جبکہ محکمہ لائیو سٹاک کے حکام نے بتایا کہ فیڈ کی قیمتیں بڑھنے، مرغی اور انڈوں کی پیداوار میں کمی سے قیمتوں پراثر پڑا ہے۔سیکرٹری صنعت و تجارت واصف خورشید، ایڈیشنل سیکرٹری صنعت و تجارت،سپیشل برانچ اور متعلقہ محکموں کے افسران نے اجلاس میں شرکت کی جبکہ صوبے بھر کے کمشنرز،ڈپٹی کمشنرز اور پولیس افسران وڈیو لنک کے ذریعے اجلاس میں شریک ہوئے۔