اشیاء کی مقررہ نرخوں پر دستیابی یقینی بنانے کیلئے صوبہ میں 171سہولت بازاروں کو فعال کر دیاگیا  

لاہور سمیت دیگر بڑے شہروں میں سہولت بازاروں کی تعداد کو بڑھایا جائے، چیف سیکرٹری کا حکم

اشیاء کی مقررہ نرخوں پر دستیابی یقینی بنانے کیلئے صوبہ میں 171سہولت بازاروں کو فعال کر دیاگیا  

لاہور: وزیر اعظم کی خصوصی ہدایت پر اشیاء ضروریہ بالخصوص آٹا اور چینی کی مقررہ نرخوں پر دستیابی یقینی بنانے کیلئے صوبہ میں 171سہولت بازاروں کو فعال کر دیا گیا ہے جبکہ25اضلاع میں انکی جیو ٹیگنگ کا کام بھی مکمل کر لیا گیا ہے۔   یہ بات چیف سیکرٹری پنجاب کی زیر صدارت پرائس کنٹرول سے متعلق اجلاس میں بریفنگ کے دوران بتائی گئی۔ اجلاس میں صنعت، زراعت، خوراک اور دیگر متعلقہ محکموں کے ایڈمنسٹریٹو سیکرٹریز، کمشنر لاہور اورایڈیشنل آئی جی سپیشل برانچ نے شرکت کی جبکہ ڈویژنل کمشنرز اور ڈپٹی کمشنرز ویڈیو لنک کے ذریعے شریک ہوئے۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے چیف سیکرٹری نے کہا کہ سہولت بازار قائم کرنے کا مقصد عام آدمی کو زیادہ سے زیادہ ریلیف فراہم کرنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعلیٰ پنجاب پرائس کنٹرول  سے متعلق روزانہ کی بنیاد پر رپورٹ لیتے ہیں۔

انہوں نے ہدایت کی کہ لاہور سمیت دیگر بڑے شہروں میں سہولت بازاروں کی تعداد کو بڑھایا جائے اور وہاں آٹا اور چینی سمیت اشیاء خورونوش کی رعائتی نرخوں پر دستیابی کو یقینی بنایا جائے۔انہوں نے کہا کہ سہولت بازاروں میں اشیاء خورونوش بالخصوص آٹا اور چینی کی دستیابی اور فروخت سے متعلق روزانہ کی بنیاد پر رپورٹ بھجوائی جائے۔ چیف سیکرٹری نے ہدایت کی کہ پرائس کنٹرول اقدامات کے سلسلے میں ٹائیگر فورس کی خدمات سے استفادہ کیا جائے اوررضاکاروں کو دکانوں پر نرخنامے اور قیمتوں کو چیک کر کے انتظامیہ کو رپورٹ کرنے کی ذمہ داریاں تفویض کی جائیں۔

انہوں نے افسران کو حکم دیا کہ سہولت بازاروں کیساتھ ساتھ اوپن مارکیٹ میں بھی اشیاء کی قیمتوں، طلب اور رسد کی کڑی نگرانی کی جائے اور انسپکشنزکی تعداد کو بڑھایا جائے۔ انہوں نے کہا کہ قیمتوں کو اعتدال میں رکھنے کیلئے پھلوں اور سبزیوں سمیت زرعی اجناس کی طلب، رسد اور پیداوارسے متعلق معلومات کا حصول نہایت اہمیت کا حامل ہے، محکمہ زراعت اور دیگر متعلقہ صوبائی محکموں کو اس سلسلے میں فعال کردار ادا کرنا ہوگا۔