بورڈ کی کارکردگی میں حائل رکاوٹیں دور کرنے کے لیے ضروری قانون سازی کریں گے:راجہ بشارت

سرکاری زمینیں قبضہ مافیا سے ہر قیمت پر واگذار کرائیں گے اور قابضین و انکے آلہ کاروں کے خلاف سخت قانونی کارروائی بھی کریں گے-وہ آج اپنی زیر صدارت پنجاب کوآپریٹوز لیکوڈیشن بورڈ کے دفتر میں ایک اجلاس کی صدارت کر رہے تھے: صوبائی وزیر قانون،پارلیمانی امور و کوآپریٹوز

 بورڈ کی کارکردگی میں حائل رکاوٹیں دور کرنے کے لیے ضروری قانون سازی کریں گے:راجہ بشارت

لاہور : صوبائی وزیر قانون،پارلیمانی امور و کوآپریٹوز راجہ بشارت نے کہا ہے کہ سرکاری زمینیں قبضہ مافیا سے ہر قیمت پر واگذار کرائیں گے اور قابضین و انکے آلہ کاروں کے خلاف سخت قانونی کارروائی بھی کریں گے-وہ آج اپنی زیر صدارت پنجاب کوآپریٹوز لیکوڈیشن بورڈ کے دفتر میں ایک اجلاس کی صدارت کر رہے تھے-اجلاس میں لیکوڈیشن بورڈ کی کارکردگی اور مسائل کا تفصیلی جائزہ لیا گیا جبکہ چیئرمین بورڈ طارق محمود جاوید اور دیگر افسران نے صوبائی وزیر کو بریفنگ دی-

راجہ بشارت نے کہا کہ بورڈ کی کارکردگی میں حائل رکاوٹیں دور کرنے کے لیے ضروری قانون سازی کریں گے-انہوں نے ہدایت کی کہ بورڈ کی جائدادوں کے زیر التوا مقدمات منطقی انجام تک پہنچانے کے لیے ہر ممکن معاونت کریں گے اور ناجائز قبضے واگذار کرانے کے لیے متعلقہ کمشنر و آرپی او کا بھرپور تعاون حاصل کیا جائے گا-انہوں نے کہا کہ وزیراعلیٰ عثمان بزدار کی ہدایت ہے کہ سرکاری زمین ناجائز قابضین سے چھڑانے کے لیے موثر اقدامات کئے جائیں -انہوں نے چیئرمین کو ہدایت کی کہ بقایا قرضوں کی وصولی کے لیے بھر پور اقدامات کیے جائیں جن کی رپورٹ ہرہفتے انہیں بھجوائی جائے-

انہوں نے یہ بھی حکم دیا کہ مقدمات سے پاک جائیدادوں کی شفاف نیلامی کا عمل فوری طور پر شروع کیا جائے-قبل ازیں بورڈ حکام کی طرف سے دی جانے والی بریفنگ میں بتایا گیا کہ بورڈ کو صوبہ بھر میں موجود اپنی جائیدادوں کا سالانہ کرایہ 6 کروڑ روپے وصول ہو رہا ہے جبکہ واجب الوصول 6 ارب روپے کے قرضوں میں سے اب تک  4 ارب بقایا ہیں -چیئرمین نے یہ بھی بتایا کہ بورڈ کی297 میں سے 110 قیمتی جائیدادیں فوری طور پر نیلامی کے لیے دستیاب ہیں جبکہ باقی جائدادیں عدالتی مقدمات کی وجہ سے نیلام نہیں کی جا سکتیں -