صوبائی وزیر اقلیتی امور اعجاز عالم آگسٹین کی یوحنا آباد میں رکشوں کی تقسیم

(ن) لیگ کے دور میں قید42بے گناہ افراد کی رہائی حق کی فتح ہے:اعجاز عالم آگسٹین

صوبائی وزیر اقلیتی امور اعجاز عالم آگسٹین کی یوحنا آباد میں رکشوں کی تقسیم

لاہور: صوبائی وزیر انسانی حقوق و اقلیتی امور اعجاز عالم آگسٹین نے کہا ہے کہ یوحنا آباد میں رہنے والے تمام مسیحی جانتے ہیں کہ مریم نواز اسی باپ کی بیٹی ہے ،جس نے یوحنا آباد کے 42بے گناہ لوگوں کو قیدکروایا تھاجبکہ یوحنا آباد شہباز شریف کا حلقہ تھا مگر اپنے دور اقتدار میں ایک پائی کا بھی کام نہیں کرواسکے بلکہ وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کے خصوصی دلچسپی کے باعث یوحنا آباد کو 30کروڑ روپے کی لاگت سے ماڈل ویلیج بنایاجا رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ لمبے عرصہ تک بے گناہ لوگوں کو جیل میں رہنا پڑا ،جس کی وجہ سے ان کا خاندان بہت سے معاشی مسائل سے دوچار رہا تاہم تحریک انصاف کی حکومت میں بے روزگاری کا خاتمہ یقینی بنانے کے لئے تمام تر وسائل برﺅے کار لا رہے ہیں۔

ان خیالات کا اظہار صوبائی وزیر نے یوحنا آباد میں مستحق خاندانوں میں روزگار کے لئے رکشو ں اور راشن کی تقسیم کے موقع پر کیا جبکہ اس موقع پر آرچ بشپ لاہور سبسچئین شا، تحریک انصاف کے مقامی رہنماءاور مذہبی اقلیتوں سے وابستہ نمائندگان بھی موجود تھے۔ صوبائی وزیر نے دوران خطاب کہا کہ پاکستانی عوام بخوبی جانتی ہے کہ مسٹر ٹین پرسنٹ کس کا تخلص ہے اور کس پر کرپشن کے کیسز ہیں جبکہ عمران خان کی ذات پر انگلیاں اٹھانے والے تحریک انصاف کے اڑھائی سالہ حکومتی دور میں کو ئی ایک بھی کرپشن کا اسکینڈل سامنے لائیں تو بات کیجائے۔

انہوں نے کہاکہ ریاست مدینہ ایک ایسا خواب ہے جو صرف عمران خان کے دور اقتدار میں ہی دیکھا جا سکتا ہے کیونکہ عوام تمام جھوٹے لیڈروں کو کئی بارآزما چکی ہے اور یہ ایک اٹل حقیقت ہے کہ پاکستان مشکل سفر سے گزر چکا ہے، اب وہ وقت بہت نزدیک ہے جب پاکستان بھی ترقی یافتہ ممالک کی فہرست میں شامل ہوگا اور عوام اسکے ثمرات واضح طور پر محسوس کر سکیں گے۔رکشے حاصل کرنیوالے خاندانوں نے صوبائی وزیرکا شکریہ اداکیا اور امید ظاہر کی کہ تحریک انصاف کے دور حکومت میں مذہبی اقلیتوں کے مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کیئے جائیں گے۔بعد ازاں صوبائی وزیر نے یوحنا آباد میں جاری ترقیاتی کاموں کا جائزہ لیا اور انتظامیہ کو ہدایت کی کہ کام کو جلد از جلد مکمل کیا جائے تاکہ لوگوں کو ترقیاتی کاموں کے باعث حائل مشکلات کا خاتمہ ہو سکے۔