میاں اسلم اقبال کی ایوان صنعت وتجارت آمد، تاجروں اور صنعت کاروں کو مسائل کے حل کی یقین دہانی

تاجروں اور صنعت کاروں کے مسائل کا حل ہماری ذمہ داری ہے اور ہم یہ ذمہ داری پوری کریں گے۔ میاں اسلم اقبال

میاں اسلم اقبال کی ایوان صنعت وتجارت آمد، تاجروں اور صنعت کاروں کو مسائل کے حل کی یقین دہانی

لاہور:.صوبائی وزیر صنعت و تجارت میاں اسلم اقبال نے آج ایوان صنعت و تجارت لاہور کا دورہ کیاجہاں انہوں نے صنعت کاروں اور تاجروں سے ملاقات کی۔ صدر لاہور چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری عرفان اقبال شیخ نے صوبائی وزیر کو تاجروں اور صنعتکاروں کو درپیش مسائل سے آگاہ کیا۔ صنعت کاروں اور تاجروں نے واٹر چارجز، لاہور انڈسٹری کی ریگولرائزیشن، میرج ہالز کھولنے، مارکیٹوں کے اوقات کار بڑھانے اور ہفتہ کے روز مارکیٹیں کھولنے کے مطالبات کئے۔ تاجروں نے مارکیٹوں میں بارش کے پانی جمع ہونے سے پیدا ہونے والے مسائل سے بھی آگاہ کیا۔ صوبائی وزیر صنعت و تجارت میاں اسلم اقبال نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ کورونا وباء کے باعث ہر شعبے کی طرح کاروباری طبقہ کو بھی مشکل ترین حالات کا سامنا کرنا پڑا ہے۔تاجروں اور صنعت کاروں کے مسائل کا حل ہماری ذمہ داری ہے اور ہم یہ ذمہ داری پوری کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ کورونا وباء کے دوران ہر طرف سے مکمل لاک ڈاؤن کی آوازیں آ رہی تھی لیکن وزیر اعظم عمران خان نے مشکل حالات میں متوازن اور درست حکمت عملی اپنائی۔ وہ اپنے عوام کو بھوک اور بیماری سے بچانا چاہتے تھے۔ان کے دانش مندانہ فیصلوں کے مثبت نتائج سامنے آئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کاروبار کیلئے بہترین ماحول فراہم کر رہے ہیں اور صنعت کاروں کو ترجیحی بنیادوں پر سہولتیں دی جا رہی ہیں۔صوبائی وزیر نے ایم ڈی واسا کو ہدایت کی کہ تاجروں کے ساتھ صنعتوں کیلئے واٹر چارجز میں یکسانیت لانے کیلئے رپورٹ تیار کر کہ بھیجیں۔صوبائی وزیر نے ہدایت کی کہ ایم ڈی واسا برانڈرتھ روڈ کا خود دورہ کریں اور وہاں نکاسی آب کے پیدا ہونے والے مسائل حل کریں۔ مارکیٹوں میں بارش کا پانی کھڑا نہیں چاہئے۔ نالوں کی بھل صفائی کی جائے اور آئندہ ایسا مسئلہ پیدا نہیں ہونا چاہئے۔ لاہور کی انڈسٹری کی ریگولرائزیشن کے حوالے سے صوبائی وزیر کا کہنا تھا کہ لاہور کا ماسٹر پلان ریوائز کیا جا رہا ہے اور جب تک ماسٹر پلان بن نہیں جاتا لاہور کی انڈسٹری کو ایل ڈی اے کی جانب سے نوٹسز نہیں آئیں گے۔ماسٹر پلان کے بننے سے یہ مسئلہ حل ہو جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ عید کے بعد ریسٹورانٹس کھولنے کی تجویز وفاقی حکومت کے سامنے رکھیں گے۔ کورنا وباء کی صورتحال میں بہتری کی صورت میں میرج ہالز ستمبرکے پہلے ہفتے میں کھول دیں گے۔ مارکیٹوں کے اوقات کار بڑھانے اور ہفتہ کو مارکیٹیں کھولنے کے حوالے سے کابینہ کمیٹی اور این سی او سی کے اجلاس میں جو بھی متفقہ اور یکساں فیصلہ ہو گا اس پر عمل کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ عوام اور خدمات  فراہم کرنے والے اداروں میں رابطے کا فقدان ختم کریں گے اور خدمات کی فراہمی کے عمل کو بہتر بنایا جائے گا۔ تاجروں اور صنعت کاروں نے مسائل کے حل میں ذاتی دلچسپی لینے اور بھرپور کاوشوں پر صوبائی وزیر میاں اسلم اقبال کو زبردست خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ آپ کے ہوتے ہوئے ہمیں اپنے تمام مسائل کے سو فیصد حل کا یقین ہے۔ایم ڈی واسا، محکمہ ہاؤسنگ کے افسران اور سابق صدرلاہور چیمبر الماس حیدر اور لاہور چیمبر کی ایگزیکٹو کمیٹی کے ممبران کے علاوہ بڑی تعداد میں صنعت کار اور تاجر بھی موجود تھے۔

٭٭٭٭٭ 

Attachments area