چیف سیکرٹری کی زرعی اجناس کی قیمتوں کو کنٹرول کرنے کیلئے پامرا ایکٹ کے رولز جلد منظور کرانے کی ہدایت

 سبزیوں کے نرخوں میں فوری کمی سے متعلق سفارشات تیار کرنے کیلئے سیکرٹری صنعت کی سربراہی میں آٹھ رکنی کمیٹی قائم  ، مختلف شہروں میں سبزیوں کے نرخوں میں واضح فرق کی بنیادی وجہ منڈیوں میں نیلامی کا  فرسودہ نظام ہے، اجلاس سے خطاب

چیف سیکرٹری کی زرعی اجناس کی قیمتوں کو کنٹرول کرنے کیلئے پامرا ایکٹ کے رولز جلد منظور کرانے کی ہدایت

لاہور: چیف سیکرٹری پنجاب نے ہدایت کی ہے کہ سبزیوں سمیت زرعی اجناس کی قیمتوں کو موثر انداز میں کنٹرول کرنے کیلئے زرعی منڈیوں کے نظام کو جدید خطوط پر استوار کرنے کیلئے بنائے گئے پنجاب ایگریکلچر مارکیٹنگ ریگولیٹری اتھارٹی (پامرا)ایکٹ کے رولزکو جلد از جلد منظور کرایا جائے۔ انہوں نے یہ ہدایت پرائس کنٹرول کے سلسلے میں روزانہ منعقد ہونے والے جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کی۔ چیف سیکرٹری نے کہا کہ وزیر اعظم اور وزیر اعلیٰ پنجاب کی ہدایت کے مطابق اشیاء ضروریہ بالخصوص آٹا اور چینی کی مقررہ نرخوں پر فروخت کو ہر صورت یقینی بنایا جائے گا اور اس سلسلے میں صوبے میں سہولت بازاروں کے قیام سمیت متعدد ٹھوس اقدامات کئے جا رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ مختلف شہروں میں سبزیوں کے نرخوں میں واضح فرق کی بنیادی وجہ منڈیوں میں نیلامی کا  فرسودہ نظام ہے۔  انہوں نے کہا کہ صارفین کو ریلیف فراہم کرنے کیلئے منڈیوں سے آڑھتی اور کمیشن ایجنٹ کی اجارہ داری کو ختم کرنا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ کاشتکاروں کی جانب سے صارفین کو زرعی اجناس کی براہ راست فروخت سے مڈل مین کے کردار کو محدود کرنے میں مدد ملے گی۔ سبزیوں کی قیمتوں میں فوری کمی لانے کیلئے چیف سیکرٹری نے سیکرٹری صنعت کی سربراہی میں آٹھ رکنی کمیٹی قائم کر دی جو اپنی سفارشات دو روز میں پیش کریگی۔ کمیٹی کے اراکین میں سپیشل سیکرٹری ایگریکلچر مارکیٹنگ، تین ڈویژنل کمشنرز اور تین ڈپٹی کمشنرز شامل ہیں۔

چیف سیکرٹری نے کین کمشنر پنجاب کو ہدایت کی کہ سہولت بازاروں میں چینی کی وافر مقدار میں دستیابی کو یقینی بنایا جائے اور اسکی قیمت فروخت کسی صورت85روپے فی کلو سے زیادہ نہ ہو۔ انہوں نے تمام سہولت بازاروں کی جیو ٹیگنگ کرنے سے متعلق بھی ہدایات جاری کیں۔ انہوں نے کہا کہ عام آدمی کو ریلیف کی فراہمی سے بڑی کوئی خدمت نہیں ہو سکتی، افسران اپنے فرائض کوئی دباؤ قبول کئے بغیر محنت اور ایمانداری سے انجام دیں۔

انہوں نے کہا کہ جو ڈپٹی کمشنر دباؤبرداشت نہیں کر سکتا اسے عہدے پر رہنے کا کوئی حق نہیں۔ سیکرٹری صنعت نے اجلاس کو سہولت بازاروں اور اشیاء کی قیمتوں اور دستیابی بارے تفصیلی بریفنگ دی۔ اجلاس میں ایڈیشنل چیف سیکرٹری (جنوبی پنجاب)، سیکرٹری خوراک، سی ای او اربن یونٹ، چیئرمین پی آئی ٹی بی، کمشنر لاہور،سپیشل سیکرٹری ایگریکلچر مارکیٹنگ نے شرکت کی جبکہ ڈویژنل کمشنرز، آر پی اوز، ڈپٹی کمشنرز اور ڈی پی اوز ویڈیو لنک کے ذریعے شریک ہوئے۔