پنجاب سکل ڈویلپمنٹ اتھارٹی کو پوری طرح فعال کیا جائے گا، میاں اسلم اقبال

صوبے میں بننے والے 13سپشل اکنامک زونز میں نوجوانوں کے لئے روزگار کے بے شمار مواقع پیدا ہوں گے صوبائی وزیر کی انڈسٹری کی ضروریات کے مطابق جدید کورسز تیار کرنے کی ہدایت

پنجاب سکل ڈویلپمنٹ اتھارٹی کو پوری طرح فعال کیا جائے گا، میاں اسلم اقبال

لاہور : صوبائی وزیر صنعت و تجارت میاں اسلم اقبال کی زیر صدارت سول سیکرٹریٹ میں اجلاس منعقد ہوا۔ جس میں کنسلٹنٹ عثمان خان نے پنجاب سکل ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے انسٹی ٹیوشنل ڈویلپمنٹ پلان کے بارے میں بریفنگ دی۔اجلاس میں کرونا وبا کے پیش نظر فنی تعلیمی اداروں کے طلبہ کی بغیر امتحانات اگلی کلاسوں میں ترقی کی پالیسی کی منظوری دی گئی۔ صوبائی وزیر صنعت و تجارت میاں اسلم اقبال نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پنجاب سکل ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے قیام کا مقصد فنی تعلیم کے اداروں کو ایک چھتری تلے لاناھے، اس ریگولیٹر ادارے کے قیام کے مقصد کے حصول کے لئے اسے مکمل فعال کریں گے۔ ادارے کے قیام کے ثمرات عوام کو ملنے چاہئیں۔ انہوں نے کہا کہ بورڈ کااجلاس جلد بلاکرادارے کوپوری طرح متحرک کیا جائے گا۔

غربت اور بے روزگاری کے مسائل پر قابو پانے کیلئے فنی تعلیم کافروغ ضروری ہے۔ صوبے میں بننے والے 13سپشل اکنامک زونز میں نوجوانوں کے لئے روزگار کے بے شمار مواقع پیدا ہوں گے۔ میاں اسلم اقبال نے کہا کہ ضرورت اس امر کی ہے کہ نوجوانوں کو انڈسٹری کی ضروریات کیمطابق فنی تربیت فراہم کی جائے۔صوبائی وزیر نیانڈسٹری کی ضروریات کے مطابق جدید کورسز تیار کرنے کی ہدایت جاری کرتے ہوئے کہا کہ جنوبی پنجاب میں ھزاروں ایکڑ اراضی پر خصوصی اقتصادی زونز بن رھے ہیں۔ان منصوبوں کی تکمیل سے خطے میں معاشی و اقتصادی سرگرمیوں بڑھیں گی۔نوجوانوں کو روزگار ملے گا اور خطے کی تقدیر بدلے گی۔ کرونا وبا کی بعد کی صورتحال اورسپیشل اکنامک زونز کو مدنظر رکھتے ہوئے منصوبہ بندی کی جائے۔ہنرمند افرادی قوت اور اسکی کھپت کا مکمل ریکارڈ رکھنے کے لئے سنٹرل ڈیٹا بیس ہونا چاہیے۔ہمیں مزید وقت ضائع کئے بغیر تیزرفتاری سے آگے بڑھناہے۔چیئرمین ٹیوٹا علی سلمان صدیق،سیکرٹری صنعت و تجارت کیپٹن ریٹائرڈ ظفر اقبال،چیئرمین فنی تعلیمی بورڈ محمد ناظر خان نیازی اور متعلقہ افسران نے اجلاس میں شرکت کی۔