کورونا لاک ڈاؤن کے باعث چرند پرند نے عوامی مقامات پر ڈیرے ڈال لیے

اس وبا سے بچاؤ کا واحد طریقہ انسانوں کی ایک دوسرے سے دوری اور سماجی فاصلوں کو قرار دیا گیا تو اس حوالے سے نافذ کیے گئے لاک ڈاؤنز کے بعد کہیں سڑکوں پر شیر سوتے دکھائی دیے تو کہیں ویران ساحلوں پر پرندوں نے ڈیرے ڈال لی

کورونا لاک ڈاؤن کے باعث چرند پرند نے عوامی مقامات پر ڈیرے ڈال لیے

کورونا وائرس کی عالمی وبا نے جہاں انسانوں کو گھروں تک محدود رہنے پر مجبور کیا وہیں جانور بھی ہر سُو ویرانی دیکھ کر سڑکوں پر نکل آئے۔ دنیا بھر میں تیزی سے پھیلنے والی عالمی وبا اب تک 40 لاکھ سے زائد افراد کو متاثر جبکہ 2 لاکھ 77 ہزار سے زائد افراد کی موت کا باعث بن چکی ہے۔ اس وبا سے بچاؤ کا واحد طریقہ انسانوں کی ایک دوسرے سے دوری اور سماجی فاصلوں کو قرار دیا گیا تو اس حوالے سے نافذ کیے گئے لاک ڈاؤنز کے بعد کہیں سڑکوں پر شیر سوتے دکھائی دیے تو کہیں ویران ساحلوں پر پرندوں نے ڈیرے ڈال لیے یا کہیں انسانوں کی غیر موجودگی کے باعث خاردار جھاڑیاں اُگ آئیں۔ یوں تو ایسے جانور سڑکوں اور ساحلوں پر رات کے وقت ہی دکھائی دیتے تھے لیکن انسانوں کے گھروں میں بند ہونے سے انہیں دن کی روشنی میں بھی ساحل سمندر پر دیکھا گیا۔