کرسچین بیٹزمین کاسوشل میڈیا چھوڑنے کا فیصلہ

کرسچین بیٹزمین کاسوشل میڈیا چھوڑنے کا فیصلہ

نومسلم جرمن وی لاگر کرسچین بیٹزمین  نے کہا ہے کہ میں اب سوشل میڈیا سے دوری اختیار کررہا ہوں لیکن اگر میرے ناقدین مزید نفرت پھیلانا چاہتے ہیں تو وہ مجھے اَن فالو کرسکتے ہیں۔نومسلم جرمن وی لاگر کرسچین بیٹزمین کا پاکستانی اداکارہ و ماڈل زویا ناصر سے منگنی ٹوٹنے کے بعد سوشل میڈیا پر وضاحتی بیان جاری کردیا۔بیٹزمین نے اپنے تصدیق شدہ انسٹاگرام اکاؤنٹ پر مختلف اسٹوریز شیئر کیں جن میں اُنہوں نے وضاحتی پیغامات جاری کیے۔کرسچین بیٹزمین نے کہا کہ ’سب سے پہلے تو یہ معافی نہیں ہے لیکن یہ حیرت کی بات ہے کہ لوگ کس طرح چیزوں کو مروڑ دیتے ہیں۔‘انہوں نے کہا کہ ’پاکستان نے کُھلے دل سے میرا استقبال کیا ہے اور میں اس کے لیے ہمیشہ مشکور رہوں گا، میں اپنے مداحوں سے محبت کرتا ہوں اور میں ان سب سے پیار کرتا ہوں جو گزشتہ ایک سال سے میری کامیابی میں میرا ساتھ دے رہے ہیں۔‘

 جرمن وی لاگر نے کہا کہ ’مجھے اس ملک کی ثقافت کو اپنانا پڑا اور آپ نے مجھے قبول بھی کیا جبکہ انفراسٹرکچر کے لحاظ سے یہ ملک دنیا کا تیسرا ملک ہے اور اسے آلودگی کی وجہ سے بھی بہت زیادہ نقصان ہوتا ہے۔‘اُن کا کہنا تھا کہ ’یہ اس ملک کے حقائق ہیں، اس کا مطلب یہ نہیں ہے کہ میں ملک سے یا اس کے عوام سے نفرت کرتا ہوں، یہ جھوٹ ہے۔ میں نے جو بیان دیے وہ صرف اس لیے کہا کہ میں پاکستان کی پرواہ کرتا ہوں اور واقعی میں ایک دن ایک تبدیلی دیکھنا چاہتا ہوں۔‘کرسچین بیٹزمین نے کہا کہ ’مثبت تبدیلی دیکھنے کے لیے ہمیں غلطیوں کو قبول کرنا ہوگا اور ان کو دور کرنے کا ایک راستہ تلاش کرنا ہوگا۔‘اُنہوں نے مزید کہا کہ واضح رہے کہ حال ہی میں زویا ناصر نے فوٹو اینڈ ویڈیو شیئرنگ ایپ انسٹاگرام پر جاری کیے گئے اپنے پیغام میں کہا تھا کہ ’میں بہت ہی دکھ کے ساتھ یہ اعلان کر رہی ہوں کہ میرا اور کرسچین بیٹزمین کا اب مزید کوئی تعلق نہیں ہے۔‘