ننکانہ صاحب کے قریب سکھ یاتریوں کیلئے ریزارٹ کی لیزنگ کا فیصلہ: آصف محمود

مشیر سیاحت کی ننکانہ ریزارٹ میں سکھ یاتریوں کو تمام سہولیات کی فراہمی یقینی بنانے کی ہدایت ہرن مینار کو سیاحت کا بڑا مرکز بنانے پر کام کر رہے ہیں، مشیر وزیراعلیٰ برائے سیاحت

ننکانہ صاحب کے قریب سکھ یاتریوں کیلئے ریزارٹ کی لیزنگ کا فیصلہ: آصف محمود

لاہور:مشیر وزیراعلی پنجاب برائے سیاحت آصف محمود کی زیرصدارت اجلاس میں گوردوارہ جنم استھان ننکانہ صاحب کے قریب ٹورازم کارپوریشن کے سکھ یاتریوں کیلئے ریزارٹ کی لیزنگ کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ چیئرمین ٹورازم ڈویلپمنٹ کارپوریشن پنجاب (ٹی ڈی سی پی) ڈاکٹر سہیل ظفر چیمہ اور ایم ڈی تنویر جبار نے بھی شرکت کی۔ ایم ڈی ٹورازم کارپوریشن نے اجلاس کو بتایا کہ مختلف بڑی پارٹیوں نے ٹی ڈی سی پی ریزارٹ ننکانہ صاحب کی لیزنگ میں دلچسپی ظاہر کی ہے۔

لیزنگ کا عمل جلد مکمل کرلیا جائے گا۔ مشیر سیاحت نے ننکانہ ریزارٹ میں سکھ یاتریوں کے قیام اور دیگر ضروری سہولیات کی فراہمی یقینی بنانے کی ہدایت کی۔ اجلاس میں ہرن مینار شیخورپورہ کے ماسٹر لے آؤٹ پلان پر بھی غور کیا گیا۔ مشیر سیاحت نے کہا کہ وزیراعلیٰ سردار عثمان بزدار کی ہدایت پر ٹورازم کے فروغ کے لئے تمام ممکنہ اقدامات کئے جائیں گے۔ اس ضمن میں ہرن مینار کو سیاحت کا بڑا مرکز بنانے پر کام کر رہے ہیں۔ ٹورازم اور آرکیالوجی ڈیپارٹمنٹ مل کر ہرن مینار کا تاریخی حسن بحال کریں گے جس کے بعد یہ تاریخی ورثے کے ساتھ سیاحتی مقام میں تبدیل ہو جائے گا۔

آصف محمود نے کہا کہ ہرن مینار میں سیاحوں کو متوجہ کرنے کا بہت پوٹینشل موجود ہے۔ انہوں نے ہدایت کی کہ ہرن مینار کی ڈویلپمنٹ کے کام میں اس کا تاریخی پس منظر متاثر نہیں ہونا چاہیئے۔ اجلاس میں ہرن مینار میں پارک اور ہارٹیکلچر کا کام پی ایچ اے کے سپرد کرنے کا جائزہ لیا گیا۔ مشیر سیاحت نے کہا کہ وہ متعلقہ افسروں کے ساتھ جلد وہاں کا خود دورہ کر کے ضروری ہدایات جاری کریں گے۔