سیکریٹری آبپاشی کی  ڈھوک سنڈے مار ڈیم میں سیوریج کا پانی ڈالنے والوں کے خلاف قانونی چارہ جائی کی ہدایات

چیف انجینئر پوٹھوہار معین الدین شیخ کا ڈیم کے کیچ منٹ ایریا کا دورہ، ایگزیکٹو انجینئر کو فوری ایکشن کی ہدایات

لاہور: سیکرٹری آبپاشی کیپٹن ریٹائرڈ سیف انجم نے ڈھوک سنڈے مار ڈیم میں گندا پانی شامل کرنے والوں کے خلاف سخت قانونی چارہ جوئی کی ہدایات جاری کر دیں۔انہوں نے یہ ہدایات ڈھوک سنڈے مار ڈیم میں رہائشی کالونیوں کے سیوریج کے پانی ڈالنے کی شکایت پر نوٹس لیتے ہوئے جاری کیں۔ ترجمان آبپاشی کے مطابق سیکرٹری آبپاشی کی ہدایت پرچیف انجینئر پوٹھوہار زون معین الدین شیخ نے اپنی ٹیم کے ساتھ ڈیم کا معائنہ کیا اور سیوریج کا پانی ڈالنے والی ہاؤسنگ سوسائٹیوں کی تفصیلات لیکر ان کے خلاف مقدمات درج کروانے کے لئے کام شروع کر دیا ہے۔

اس ضمن میں چیف انجینیر پوٹھوہار نے بتایا کہ ان تمام ہاوسنگ سوسائیٹوں کو اس سے پہلے سیوریج کا پانی ڈیم کے کیچمنٹ ایریا میں ڈالنے سے روکنے کے لئے نوٹسز جاری کیے گیے لیکں تا حال ان پر کوئی عمل نہ ہونے کی وجہ سے اب قانونی چارہ جوئی کی جائے گی۔   یاد رہے کہ ڈھوک سنڈے مار ڈیم اسلام آباد کے مضافات میں واقع ہے اور اس میں 800 ایکڑ فٹ پانی سٹور کرنے کی گنجائش ہے۔جس سے تقریباً300ایکڑ زرعی اراضی سیراب ہوتی ہے۔