بیلجیئم، لکسمبرگ اور یورپی یونین میں پاکستان کے سفیرظہیر اے جنجوعہ کا یوم سیاہ کے موقع پیغام

بیلجیئم، لکسمبرگ اور یورپی یونین میں پاکستان کے سفیرظہیر اے جنجوعہ کا یوم سیاہ کے موقع پیغام

اسلام آباد :بیلجیئم، لکسمبرگ اور یورپی یونین میں پاکستان کے سفیرظہیر اے جنجوعہ نے کہا ہے کہ بھارتی حکومت نے اپنے غیر انسانی کریک ڈان، فوجی محاصرے سے کشمیریوں کو انکے بنیادی انسانی حقوق اور بنیادی آزادیوں سے محروم رکھا ہوا ہے،عالمی برادری اپنا کردار ادا کرتے ہوئے بھارت پر دبا ڈالے کہ وہ فوری طور پر ماورائے عدالت قتل بند کرے، فوجی محاصرہ ختم کرے، 5 اگست 2019 کے غیر قانونی اور یکطرفہ اقدامات کو واپس لے، اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں کی تعمیل کرے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے یوم سیاہ کے موقع پر اپنے پیغام میں کیا ۔

انہوں نے کہاکہ آج کے دن 74 سال قبل بھارتی سیکورٹی فورسز جموں و کشمیر کی سرزمین پر غیر قانونی طور پر قبضہ کرنے اور کشمیریوں کو محکوم بنانے کے لیے سری نگر میں اتری تھیں۔ انہوں نے کہاکہ اس کے بعد سے، بھارتی حکومت نے اپنے غیر انسانی کریک ڈان، فوجی محاصرے سے کشمیریوں کو ان کے بنیادی انسانی حقوق اور بنیادی آزادیوں سے محروم رکھا ہوا ہے۔

انہوں نے کہاکہ 5 اگست 2019 کو بھارتی حکومت نے بین الاقوامی قوانین، اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں اور پاک بھارت دوطرفہ معاہدوں کی سراسر خلاف ورزی کرتے ہوئے غیر قانونی طور پر مقبوضہ جموں و کشمیر کی خصوصی حیثیت کو منسوخ کر دیا۔انہوں نے 900,000 سے زیادہ ہندوستانی سیکورٹی فورسز کی تعیناتی کے ساتھ، مقبوضہ جموں و کشمیر کو دنیا کے سب سے زیادہ ملٹریائزڈ زون اور سب سے بڑی اوپن ایئر جیل میں تبدیل کر دیا گیا ہے۔