وزیراعلیٰ عثمان بزدار اور سپیکر پنجاب اسمبلی چودھری پرویزالٰہی کی ملاقات، قومی اداروں کو متنازعہ بنانے کی مذموم کوشش کی مذمت

 اداروں کیخلاف ہر سازش کا ڈٹ کر مقابلہ کیا جائے گا، قومی اداروں کی عزت پر کوئی حرف نہیں آنے دینگے:دونوں رہنماؤں کا عزم

وزیراعلیٰ عثمان بزدار اور سپیکر پنجاب اسمبلی چودھری پرویزالٰہی کی ملاقات، قومی اداروں کو متنازعہ بنانے کی مذموم کوشش کی مذمت

لاہور:.  وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدارسے سپیکر پنجاب اسمبلی چودھری پرویزالٰہی نے آج وزیراعلیٰ آفس میں ملاقات کی۔ رکن قومی اسمبلی چودھری مونس الٰہی بھی اس موقع پر موجود تھے۔ ملاقات میں باہمی دلچسپی کے امور، سیاسی صورتحال اورعوام کو ریلیف دینے کیلئے کئے گئے اقدامات پر بات چیت ہوئی اور ورکنگ ریلیشن کے امور بھی زیربحث آئے۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار اور سپیکر چودھری پرویز الٰہی کی جانب سے قومی اداروں کو متنازعہ بنانے کی مذموم کوشش کی مذمت کی گئی۔ دونوں رہنماؤں نے اس عزم کا اظہار کیا کہ اداروں کے خلاف ہر سازش کا ڈٹ کر مقابلہ کیا جائے گا اور قومی اداروں کی عزت پر کوئی حرف نہیں آنے دیں گے۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہا کہ ہم سب پر اداروں کا احترام ضروری ہے۔ مخصوص ایجنڈے کے تحت اداروں کو نشانہ بنانا انتہائی افسوسناک امر ہے۔ پاکستان نازک دور سے گزر رہا ہے جبکہ افراتفری پھیلانے کی کوشش کرنے والے عناصر دشمن کے ایجنڈے پر چل رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اتحادی جماعت سے تعلقات پہلے سے زیادہ مضبوط ہیں اور فیصلہ سازی کے عمل میں مسلم لیگ (ق) کو شریک کیا گیا ہے۔ مایوسی کا شکار اپوزیشن عوام کو گمراہ نہیں کرسکتی۔ سپیکر پنجاب اسمبلی چودھری پرویز الٰہی نے کہا کہ قومی اداروں کے ساتھ کھڑے ہیں اور کھڑے رہیں گے۔ اداروں کے خلاف بیان بازی کرنے والے ملک و قوم کے خیرخواہ نہیں۔اپوزیشن اداروں کو متنازعہ بنا کر مذموم مقاصد حاصل کرنا چاہتی ہے۔ یہ وقت منفی سیاست کا نہیں بلکہ اتحاد اور اتفاق کا ہے اور اپوزیشن جماعتوں کو اپنے طرز عمل پر نظرثانی کی ضرورت ہے۔ چودھری پرویز الٰہی نے کہا کہ اپوزیشن کی جانب سے اے پی سی کا ناٹک ناکام رہا۔ عوام کو مزید سہولتیں فراہم کرنے کیلئے مل کر کام جاری رکھیں گے۔ چیئرمین پلاننگ اینڈ ڈویلپمنٹ، پرنسپل سیکرٹری وزیراعلیٰ اور سیکرٹری پنجاب اسمبلی بھی اس موقع پر موجود تھے۔

٭